330 کلو وزنی نورالحسن انتقال کرگئے، آرمی چیف کا اظہار تعزیت

 

لاہور(پبلک نیوز) موٹاپے کا شکار 330 کلو وزنی صادق آباد کا رہائشی نورالحسن انتقال کر گیا۔  نور الحسن کا 10روزقبل لاہور کےنجی اسپتال میں آپریشن کیا گیا تھا۔ وہ آئی سی یو میں زیرعلاج تھے۔  انھیں سانس لینے میں دشواری کا سامنا تھا۔ آرمی چیف نے بھی نورالحسن کے انتقال پر دلی افسوس کا اظہار کیا۔

 

دس روز قبل لاہور کے شالیمار اسپتال میں نورالحسن کا کامیاب آپریشن ہوا۔ ڈاکٹرز کے مطابق نورالحسن کو آپریشن کے بعد سانس لینے میں دشواری پیش آئی۔ جس پر آئی سی یو میں رکھا گیا۔ اس دوران تین بار وینٹی لیٹر پر بھی لایا گیا۔

 

نور الحسن کے ڈاکٹر معاذ نے بتایا  ہے کہ اسپتال کے آئی سی یو میں خاتون مریضہ کی ہلاکت کے بعد مریضہ کے لواحقین نے ہنگامہ آرائی کی۔ اسپتال کے آئی سی یو سے ڈاکٹر اور عملہ بھاگ گیا۔ آئی سی یو میں 2 گھنٹے تک کوئی موجود نہ تھا۔

 

 

آرمی چیف نے بھی نورالحسن کے انتقال پر اظہار افسوس کیا، ڈی جی آئی ایس پی آر نے ٹویٹ کیا کہ کوئی کوشش ہی کر سکتا ہے، باقی اللہ کی رضا۔ اللہ تعالیٰ مرحوم کی مغفرت کرے۔ آمین۔

 

نور الحسن کے لواحقین کے مطابق نورالحسن کی طبیعت 2 دن پہلے خراب ہوئی تھی۔ لیکن گزشتہ رات ڈاکٹر نے اطمینان کا اظہار کیا۔ لواحقین نے نور الحسن کی موت کو اللہ کی مرضی قرار دیا۔

 

نور الحسن نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے مدد کی اپیل کی تھی۔ جس کے بعد آرمی چیف کی ہدایت پر ہیلی کاپٹر بھجوایا گیا اور انہیں لاہور منتقل کیا گیا تھا۔

 

ہیلتھ کیئر کمیشن کی جانب سے تین رکنی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے جو کہ  واقعے کی تحقیقات کر کے رپورٹ  پیش کرے گی۔

احمد علی کیف  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں