عبدالعلیم خان نے غیرقانونی قبضے، شاہراہوں پر تجاوزات قائم کیں: نیب رپورٹ

لاہور(ادریس شیخ) شاہراہوں پر تجاوزات قائم کیں، پارک ویو ولاز کے نام سے ریور ایج سوسائٹی کی غیر قانونی طور پر توسیع کی گئی، پارک ویو ولاز کے پلاٹ فراڈ کے تحت ای او بی آئی کو فروخت کیے۔ عبدالعلیم خان کے خلاف نیب کی رپورٹ۔

رپورٹ کے مطابق عبدالعلیم خان نے عبدالعلیم خان نے غیر قانونی قبضے کیے، شاہراہوں پر تجاوزات قائم کیں، ہاؤسنگ سوسائٹی کے خلاف ایس ای سی پی، ایل ڈی اے، ذیشان علی اور مبشر جاوید نے نیب سے رجوع کیا۔ 2013ء میں ذیشان علی نے ریور ایج سوسائٹی کے خلاف اینٹی کرپشن سے رجوع کیا، معاملہ بعد میں نیب کو بھجوایا گیا۔ 

ریور ایج سوسائٹی کے معاملات ویژن ڈویلپرز کے سپرد ہیں۔ جون 2016ء میں مبشر جاوید نے پارک ویو ولاز اور ریور ایج سوسائٹی کے خلاف نیب سے رجوع کیا۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مبشر جاوید نے غیر قانونی ہاؤسنگ سوسائٹی اور پلاٹوں کی غیر قانونی فروخت کا الزام لگایا۔

نیب کے مطابق سکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان نے معاملہ نیب لاہور کو بھجوایا، ایس ای سی پی کے مطابق ویژن ڈویلپرز کرپشن، دھوکہ دہی اور فراڈ میں ملوث ہے، ایل ڈی اے نے بھی نیب سے ریور ایج سوسائٹی میں کرپشن کے حوالے سے رجوع کیا۔

نیب کے ویو ولاز کی غیر قانونی مارکیٹنگ کی گئی، پارک ویو ولاز کے پلاٹ فراڈ کے تحت ای او بی آئی کو فروخت کیے گئے۔ عبدالعلیم خان نے نیب کے خلاف لاہور ہائی کورٹ سے رجوع کر کے حکم امتناعی لے رکھا ہے۔ نیب کی جانب سے عبدالعلیم خان کی درخواست مسترد کرنے کی لاہور ہائی کورٹ سے استدعا کی ہے جس کے بعد انکوائری کو حتمی شکل دی جائے گی۔

عطاء سبحانی  6 ماه پہلے

متعلقہ خبریں