اہلیہ تشدد کیس، اداکار محسن عباس ضمانت قبل از گرفتاری منظور کر لی گئی

لاہور(شاکر محمود اعوان) سیشن عدالت نے امانت میں خیانت اور سنگین نتائج کی دھکمیوں کے مقدمے میں نامزد ادکار محسن عباس کی عبوری ضمانت منظور کر لی اور 5 اگست تک ادکار محسن عباس کو گرفتار کرنے سے روک دیا گیا۔

 

تفصیلات کے مطابق ایڈیشنل سیشن جج تجمل شہزاد نے اداکار محسن عباس کی درخواست ضمانت پر سماعت کی۔ اداکار محسن عباس سیشن عدالت میں پیش ہوئے۔ دوران سماعت محسن عباس کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ ادکار کی اہلیہ نے انکے خلاف تھانہ ڈیفنس سی امانت میں خیانت اور سنگین نتائج کی دھمکیوں کا مقدمہ درج کروایا ہے۔


درخواستگزار کے وکیل نے استدعا کہ مقدمہ جھوٹا اور بے بنیاد ہے۔ لہذا عدالت عبوری ضمانت منظور کرے۔ عدالت نے پچاس پچاس ہزار روپے کے مچلکوں کے عوض درخواست ضمانت منظور کرتے ہوئے تھانہ ڈیفنس سی سے مقدمے کی مکمل تفصیلی رپورٹ طلب کر لی ہے۔ محسن عباس کو نجی ٹی وی کی جانب سے ملازمت سے بھی نکال دیا گیا ہے۔

میڈیا سے گفتگو میں محسن عباس نے کہا کہ یہ سارا کچھ پری پلان کر کہ کیا گیا ہے۔ اب انکے کیس کا فیصلہ عدالت میں ہی ہو گا۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں