تعلیمی اداروں میں منشیات فروشی کیخلاف کیے گئے اقدامات ناکام

لاہور(پبلک نیوز) تعلیمی اداروں میں منشیات کا استعمال بڑھ گیا۔ نجی یونیورسٹی کی طالبہ بھی نشے کے ناسور کی بھینٹ چڑھ گئی پولیس کا تعلیمی اداروں کے گرد منشات فروشوں کے خلاف کریک ڈاون کاغذی ثابت ہوا۔

 

لاہور کے تعلیمی اداروں میں منشیات کی روک تھام کے لئے کیے گئے تمام اقدامات پر عملدرآمد نہ ہو سکا۔ تعلیمی اداروں میں منشیات کے بڑھتے استعمال طلباء و طالبات کی جانیں نگلنے لگا۔ جوہر ٹاون میں نجی یونیورسٹی کی طالبہ نشے کے ناسور کی بھینٹ چڑھ گئی۔

 

ٹاؤن شپ، جوہر ٹاؤن میں نجی یونیورسٹی کی طالبہ کی ہلاکت نے لاہور پولیس کا تعلیمی اداروں کے گرد منشیات فروشوں کے خلاف جاری آپریشن پر کئی سوالات اٹھا دیئے۔ ڈی آئی جی آپریشنز لاہور وقاص نذیر نے کہا کہ تعلیمی اداروں میں منشیات فروخت کرنے والے سینکڑوں منشیات فروشوں کو پکڑ کر حوالات بھجواچکے ہیں۔

 

والدین کا کہنا ہے کہ تعلیمی اداروں میں منشیات کے بڑھتے رجحان کو ختم کرنے کے لئے ضروری ہے کہ پولیس چھوٹے منشیات فروشوں کے ساتھ ساتھ بڑے مگرمچھوں کو گرفتار کرے۔

عطاء سبحانی  9 ماه پہلے

متعلقہ خبریں