این اے125:مبینہ دھاندلی کیس، خواجہ سعد رفیق کے سر پر لٹکتی تلوار ہٹ گئی

لاہو(پبلک نیوز) این اے 125 میں مبینہ دھاندلی کا شور، خواجہ سعد رفیق کے سر پر لٹکتی تلوار ہٹ گئی، خواجہ سعدرفیق کے لیے عام انتخابات میں گھوڑا بھی حاضر اورمیدان صاف ہو گیا، این اے 125 میں دھاندلی نہیں ہوئی، سپریم کورٹ نے فیصلہ سنا دیا، الیکشن ٹریبیونل کا فیصلہ کالعدم قرار دیکر حلقے میں دھاندلی کے الزامات مسترد کر دیے۔

سپریم کورٹ کی لاہور رجسٹری میں جسٹس عظمت سعید کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے کیس کا فیصلہ سنایا۔ فیصلہ خواجہ سعد رفیق کے الیکشن ٹربیونل کے فیصلہ کے خلاف سپریم کورٹ میں دائر دراست پر کیا گیا، انہوں نے الیکشن ٹربیونل کے جج جاوید رشید محبوبی کے فیصلہ کے خلاف اپیل دائر کی تھی۔

الیکشن ٹربیونل کے جج جاوید رشید محبوبی نے این اے 125 کے انتخابی نتائج کالعدم قرار دے کر ضمنی انتخاب کا حکم دیا تھا، عام انتخابات 2013 میں خواجہ سعدرفیق حلقہ این اے 125 میں کامیاب قرارپائے تھے۔ خواجہ سعد نے حامد خان کو شکست دی تھی، حامد خان نے انتخابی نتائج الیکشن ٹربیونل میں چیلنج کیے تھے۔

ویڈیو کیلئے کلک کریں:

1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں