داتا دربار خودکش حملے میں زخمی ہونے والا ایک اور پولیس اہلکار دم توڑ گیا

لاہور(پبلک نیوز) داتا دربار خودکش حملے میں زخمی ہونے والا پولیس اہلکار صدام حسین دم توڑ گیا، شہید ہونے والوں کی تعداد 11 ہو گئی ہے، 2 زخمیوں کی حالت تاحال نازک بتائی جا رہی ہے۔ ایف آئی آر کے مطابق خودکش حملہ آور اکیلا نہیں تھا۔

 

صوبائی دارالحکومت لاہور میں داتا دربار کے باہر پولیس وین کے قریب خود کش دھماکے سے زخمی ہونے والا پولیس اہلکار صدام حسین دم توڑ گیا ہے جس کا تعلق ایلیٹ فورس سے تھا جبکہ شہید ہونے والوں کی تعداد 11 ہو گئی ہے، ڈائریکٹر میو ہسپتال ایمرجنسی کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ دو زخمیوں کی حالت نازک ہے، جبکہ دو زخمیوں کو وینٹی لیٹر پر رکھا گیا ہے اور دیگر زخمی افراد کو سر جیکل ٹاور منتقل کیا گیا ہے۔

متعلقہ خبر:لاہور میں داتا دربار کے باہر پولیس وین کے نزدیک دھماکا

ایف آئی آر میں کہا گیا ہے کہ خودکش حملہ آور اکيلا نہيں تھا، اس کے دو ساتھی اس کے ساتھ آئے اور حادثہ کی جگہ پر چھوڑ کر چلے گئے، خودکش حملہ آور اور اس کے دو ساتھی مينار پاکستان کی جانب سے داتا دربار آئے، ذرائع کے مطابق خودکش حملہ آور کے ساتھيوں کی تلاش جاری ہے۔

عطاء سبحانی  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں