"آپ کچھ دیر رکیں میں ہیلی کاپٹر میں واپس آتا ہوں"

کراچی (پبلک نیوز) جعلی اکاؤنٹس کیس میں بینکنگ کورٹ نے سابق صدر آصف زرداری کی عبوری ضمانت منظور کر لی۔ 20 لاکھ روپے مچلکوں کے عوض ضمانت منظور کی گئی۔

سابق صدر آصف علی زرداری کراچی کی بینکنگ کورٹ میں پیش ہوئے جہاں عدالت نے 20 لاکھ روپے کے عوض ان کی عبوری ضمانت منظور کی۔

بینکنگ کورٹ نے سابق صدر کے وارنٹ گرفتاری جاری کیے تھے جس پر آصف زرداری نے اسلام آباد ہائیکورٹ سے حفاظتی ضمانت حاصل کی جس پر عدالت نے انہیں 3 ستمبر تک متعلقہ ٹرائل کورٹ میں پیش ہونے کا حکم دیا تھا۔

آصف زرداری کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے بینکنگ کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ منی لانڈرنگ کا معاملہ بینکنگ کورٹ کے دائرہ اختیار میں نہیں، ان کے مؤکل کے خلاف بے بنیاد چارج شیٹ تیار کی گئی ہے۔

سابق صدر خوشگوار موڈ میں نظر آئے۔ صحافی نے ان سے سوال کیا کہ آپ ہیلی کاپٹر میں نہیں آئے جس پر انہوں نے کہا کہ آپ کچھ دیر رکیں میں ہیلی کاپٹر میں واپس آتا ہوں۔ صحافی نے سوال کیا کہ صدر پاکستان کون بنےگا جس پر انہوں نے کہا کہ کوشش ہے اعتراز احسن صدر پاکستان بنیں۔

جعلی بینک اکاؤنٹس کیس میں اومنی گروپ کے سربراہ انور مجید، غنی مجید، حسین لوائی اور طہٰ رضا گرفتار ہیں جب کہ آصف زرداری کی ہمشیرہ فریال تالپور اور انور مجید کے 3 صاحبزادے عبوری ضمانت پر ہیں۔

احمد علی کیف  2 سال پہلے

متعلقہ خبریں