نادان لوگوں سے خطرہ، نوازشریف کی مجھے، نہ انہیں میری ضرور ت ہے: آصف زرداری

لاہور (پبلک نیوز) سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ ہم نے قانون کی حکمرانی کے لیے وکلا کی تنخواہیں بڑھائیں۔ میرے 5سالہ دور صدارت میں کوئی دھبہ نہیں۔ ہمیں ناداں لوگوں سے خطرہ ہے۔ میں نے بلوچستان والوں کو ان کا حق دینے کی بات کی۔ 30سال سےمیری کردارکشی کی جارہی ہے۔

بلاول ہاؤس میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ میں نے اقتدارمیں آ کر آئین کو درست کیا۔ چین سے مستقبل وابستہ، اپنےدور میں تجارت بڑھائی۔ بیل آؤٹ پیکج پر اعتراض نہیں مگر اسے پارلیمنٹ میں لایا جائے۔

انھوں نے کہا کہ ہم عدلیہ کے خلاف نہیں ہیں۔ سعودی عرب نے ہماری، ہم نےان کی مدد کی۔ ریاست کوخطرہ باہرسے نہیں اندر سے ہے۔ آمریت کی اداکاری بدترین طریقے سے کی جارہی ہے۔ سارا ڈرامہ 18ویں ترمیم ختم کرنے کے لیے کیا جا رہا ہے۔ نوازشریف کی مجھے،نہ انہیں میری ضرورت ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہر طرف سے مجھ پر کیوں حملہ کیا جا رہا ہے۔ ایف آئی اے ڈیڑھ کروڑ کا کیس کیوں ڈال رہی ہے۔ مسئلہ مجھ سے ہے، پکڑامیرے دوستوں کو جاتا ہے۔ حکومت حملے کرے گی تو اکٹھا ہونا پڑے گا۔

سابق صدر نے صحافی کے سوال پر کہا کہ میں این آر او(قومی مصالحت آرڈینینس) کیوں مانگوں گا۔ میں نے مشرف سے این آر او نہیں مانگا تھا۔
انھوں نے کہا کہ ایک پہلے لاڈلا تھا، ایک آج لاڈلا ہے۔ جس پر صحافی نے سوال کیا کہ آپ کب تک لاڈلے ہو جائیں گے؟ صحافی کے سوال پر انھوں نے جواب دیا کہ میں نے کبھی لاڈلا بننے کی کوشش ہی نہیں کی۔ صرف اتناکہوں گا،جیساکروگےویسابھروگے۔ حکومتیں گرانےمیں کوئی دلچسپی نہیں۔

انھوں نے کہا کہ کشمیریوں کے خلاف ہر حربہ استعمال کیا جا رہا ہے۔ ہمیں آنے والی نسلوں کو بچانا ہو گا۔ ہم نے پختونوں کو شناخت دی۔ انشااللہ ہم پاکستان کوترقی کی جانب لائیں گے۔

احمد علی کیف  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں