آصف زرداری نے جعلی اکاؤنٹس کیس میں الزامات ماننے سے انکار کر دیا

اسلام آباد(ضمیر علی) آصف زرداری نے نیب نوٹسز کا جواب دے دیا، آصف زرداری نے کہا کہ ان کا اور بلاول کا پارتھینون کمپنی سے کوئی تعلق ہی نہیں، وہ صرف پارک لین کمپنی میں ایک چھوٹے شراکت دار ہیں۔ سابق صدر نے جواب میں کہا کہ نیب نے اختیارات سے تجاوز کیا۔

 

جعلی بینک اکاؤنٹس کیس میں آصف زرداری نے نیب نوٹسز کا جواب دے دیا۔ پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری نے کہا کہ پارک لین کمپنی کیس پر نیب کا دائرہ اختیار نہیں، نیب قانون کے تحت نجی کمپنی کے معاملات پر احتساب بیورو کارروائی نہیں کرسکتا۔ سابق صدر نے پارک لین کمپنی اور بلٹ پروف گاڑیوں کے نوٹسز کا جواب نیب ٹیم کے حوالے کر دیا۔

 

آصف زرداری نے 55 سوالوں کے تحریری جواب دیئے، جواب میں کہا گیا کہ پارتھینون کمپنی کو نیشنل بینک کے ڈیڑھ ارب روپے قرض کا علم ہی نہیں، پارک لین کمپنی 1989 میں خریدی، اقبال میمن، کم عمر بلاول، رحمت اللہ، محمد یونس اور الطاف حسین شراکت دار تھے۔ آصف زرداری نے جواب میں کہا ہے کہ وہ پارک لین کمپنی میں صرف 25 فیصد حصص کے مالک تھے، صدر بننے سے پہلے یکم ستمبر 2008 کو کمپنی ڈائریکٹرشپ سے مستفیٰ ہوئے۔

 

آصف زرداری نے کہا کہ ان کا اور بلاول کا پارتھینون کمپنی سے کوئی تعلق نہیں، وہ پارک لین کمپنی میں صرف ایک چھوٹے شراکت دار ہیں، نجی کمپنی سے متعلق نیب کا سوالنامہ اختیارات سے تجاوز ہے۔ ذرائع کے مطابق ڈی جی نیب راولپنڈی عرفان منگی نے جواب مشترکا تحقیقاتی ٹیم کو بھجوا دیئے ہیں، جے آئی ٹی جواب کی سکروٹنی کے بعد ڈی جی نیب راولپنڈی کو رپورٹ کرے گی، جبکہ بلاول کا جواب تاحال نیب کو موصول نہیں ہوا۔

عطاء سبحانی  6 ماه پہلے

متعلقہ خبریں