چیک باؤنس کیس: سابق گورنرسندھ عشرت العباد کے بھائی عامرالعباد گرفتار

کراچی(پبلک نیوز) سٹی کورٹ انویسٹی گیشن پولیس نے سابق گورنر سندھ عشرت العباد کے بھائی عامر العباد کو گرفتار کر لیا۔ پولیس کی جانب سے عدالت میں پیش نہ کرنے خلاف عامر العباد کی اہلیہ شہلا عامر بیٹوں اور وکلاء سٹی کورٹ پولیس اسٹیشن کے باہر پریس کانفرنس کی۔

 

کراچی سٹی کورٹ میں سابق گورنر عشرت العباد خان کے چھوٹے بھائی عامر العباد کو چیک باونس ہونے کی ایف آئی آر اور گرفتاری پر عامرالعباد کی اہلیہ شہلا عامر بیٹوں اور وکلاء سٹی کورٹ پولیس اسٹیشن کے باہر پریس کانفرنس کی، اس موقع پر شہلا عامر کا کہنا تھا کہ ہمارئے ساتھ ظلم و زیاتی ہو رئی ہے، ہمیں انصاف چاہیے۔

 

انہوں نے کہا کہ چادر اور چار دیواری کا تقدس بھی پامال کیا گیا ہے۔ دوسری جانب عامر العباد کے وکیل محفوظ یار کا کہنا تھا عامر العباد کا گزشتہ بارہ سال سے وکیل ہوں، خاندانی وراثت کی پراپرٹی ہے۔ اسرار العباد نے گھر کا کرایہ لیا ہوا ہے لیکن سب میں رقم تقسیم نہیں کی، ان کا مزید کہنا تھا کہ کل عامر کی ضمانت کنفرم کرائی تھی ضمانت کے بعد وہ اپنے گھر چلے گئیے تھے جبکہ ضمانت کے لیئے پانچ لاکھ روپے مانگے جا رہے ہیں۔

 

واضع رہے کہ سٹی کورٹ انویسٹی گیشن پولیس نے رات گئے آپریشن کے دوران سابق گورنر سندھ عشرت العباد کے بھائی عامر العباد کو گرفتار کر لیا تھا۔ پولیس ذرائع کے مطابق عامر العباد کے خلاف سٹی کورٹ تھانے میں 5 لاکھ روپے کے چیک باؤنس کا مقدمہ درج ہے جس کا مقدمہ سابق گورنر ڈاکٹر عشرت العباد کے وکیل طارق نیازی نے درج کرایا تھا۔

عطاء سبحانی  3 روز پہلے

متعلقہ خبریں