میرا بھائی دہشت گرد تھا تو تیس سال نظر کیوں نہیں آیا، بھائی ذیشان

لاہور (پبلک نیوز) ساہیوال واقعہ میں جاں بحق ہونے والے ذیشان کے بھائی احتشام نے کہا ہے کہ میرا بھائی دہشت گرد تھا تو تیس سال نظر کیوں نہیں آیا۔ یہ کیسا دہشت گرد ہے جس کے خلاف ایک مقدمہ بھی درج نہیں۔

ذیشان کے بھائی نے سی ٹی ڈی پر سوال اٹھا دیئے۔ انھوں نے کہا کہ جنہوں نے مارا وہ دہشت گرد ہیں۔ ذیشان کو دہشت گرد کہہ کر ہمارے زخموں پر نمک نہ چھڑکا جائے۔ یہ کیسا دہشت گرد ہے جس کے خلاف ایک مقدمہ بھی درج نہیں۔ گناہ چھپانے کے لیے ایک معصوم کو دہشت گرد بنا دیا گیا۔ چیف جسٹس انصاف دلائیں۔

 

احمد علی کیف  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں