کینیڈا میں مذہبی آزادی پر قدغن لگانے کی کوشش، جسٹن ٹروڈو نے مخالفت کر دی

پبلک نیوز: کینیڈابھی مذہبی منافرت کی راہ پرچلنے لگا۔ صوبے کیوبک میں سرکاری ملازمین کے لیے مذہی علامات سمجھی جانے والی اشیاء کے پہننے پر پابندی لگانے کا منصوبہ بنا لیا گیا۔ وزیراعظم جسٹن ٹروڈو نے نئے قانون کی مخالفت کر دی۔

تفصیلات کے مطابق کینیڈامیں مذہبی آزادی پرقدغن لفگانےکی کوشش۔ صوبے کیوبیک میں متنازع قانون کے ذریعے سرکاری ملازمین کے لیے کام کے دوران مذہبی علامات سمجھی جانےوالی اشیا پہننے پر پابندی کا منصوبہ تیار کر لیا گیا۔

مجوزہ قانون کے ذریعے اساتذہ، ججز، پولیس افسران اور خصوصاً مسلم خواتین نشانہ بنیں گی جو حجاب یا دیگر طریقوں سے سر ڈھانپتی ہیں۔

جسٹن ٹروڈو نے متنازع قانون کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ میں یہ سوچ بھی نہیں سکتا کہ آزاد معاشرے میں ہم شہریوں سے ان کے مذہب کی بنیاد پر امتیاز کو قانونی حیثیت دیں گے۔

احمد علی کیف  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں