حکومتی اراکین کی جارحانہ تقاریر کا مقصد کیا ہے؟

قومی اسمبلی اجلاس میں آج بھی خاصی گرما گرمی رہی، وزیر مملکت برائے مواصلات مراد سعید نے کرپشن پر بات کی تو اپوزیشن جواب دینے میدان میں آ گئی اور رانا ثناء اللہ شہباز شریف کی صفائی دینے میدان میں اترے اور انکے کرپشن میں ملوث نہ ہونے کی دہائی دیتے رہے۔

فیصل واڈا نے نوازشریف پر سندھ کا پانی چوری کرنے کا الزام لگایا تو شاہد خاقان عباسی صفائی دیتے رہے۔ ایوان میں اپوزیشن دفاعی پوزیشن پر نظر آئی۔

وفاقی وزیرِ اطلاعات ونشریات فواد چوہدری بھی ایسے دبنگ بیانات دینے میں خا... مزید پڑھیں
احمد علی کیف  11 ماه پہلے

مولانا سمیع الحق کی زندگی پر ایک طائرانہ نظر

سربراہ جے یوآئی (س) مولانا سمیع الحق اسکالر، عالم اور ایک مدبر سیاست دان تھے۔ ان کی مذہبی، سماجی اور سیاسی خدمات پر ایک طائرانہ نظر ڈالتے ہیں۔

مولانا سمیع الحق کی مذہبی ،سیاسی اور سماجی خدمات کا دائرہ کار بڑا وسیع ہے۔مولانا، اسکالر، عالم اور ایک مدبر و دانا سیاست دان تھے۔

مولانا سمیع الحق  18 دسمبر1937ء میں اکوڑہ خٹک میں پیدا ہوئے۔ انہوں نے دار العلوم حقانیہ  سے تعلیم حاصل کی ۔ اس ادارے کی بنیادان کے والد محترم نے رکھی تھی۔وہاں انہوں نے فقہ، اصول فقہ... مزید پڑھیں
احمد علی کیف  11 ماه پہلے

گلگت بلتستان: سنگلاخ پہاڑوں، سرسبز وادیوں کی سرزمین

سنگلاخ پہاڑوں اور سرسبز وادیوں کی سرزمین گلگت بلتستان کا 71واں یوم آزادی آج منایا گیا۔ اس خطہ نے یکم نومبر 1947 میں قابض ڈوگرہ راج کو شکست دے کر آزادی حاصل کی۔ چنار، باغ گلگت سمیت مختلف اضلاع میں آزادی کی تقریبات ہوئی۔

یکم نومبر 1947 کو گلگت کی غیرت مند قوم نے قابض ڈوگرہ راج کے تسلط کو شکست دے کر آذادی حاصل کی۔ گلگت بلتستان کا 71واں یوم آزادی گلگت بلتستان کے تمام اضلاع میں جوش و خروش سے منایا گیا۔ مرکزی تقریب چنار باغ گلگت میں ہوئی۔ فورس کمانڈر، گورنر، وزیراعلیٰ گلگت... مزید پڑھیں
حارث افضل  11 ماه پہلے

اے پی سی اور سالِ رواں میں مولانا فضل الرحمان کی 7ویں سیاسی ناکامی

بڑی سیاسی جماعتوں کی نیم دلی سے شرکت کے باعث مولانا فضل الرحمان کی بلائی گئی اے پی سی انعقاد سے قبل ہی ناکامی کی جانب گامزن نظر آتی ہے۔ یہ مولانا کی اس سال میں 7ویں سیاسی ناکامی ہے۔

رکن اسمبلی منتخب ہونے میں ناکامی کے بعد انتخابات کی شفافیت پر سوال اٹھانے سے حکومت کے خلاف عدم اعتماد تک مولانا ہر آپشن استعمال کرتے آرہے ہیں لیکن انہیں کامیابی نہیں ہوسکی۔

مولانا کو پہلی پسپائی کا سامنا 2018 کے انتخاب میں کرنا پڑا، جب انتخابات سے قبل، باہم مخالف مذہبی جماعتوں کے س... مزید پڑھیں
احمد علی کیف  11 ماه پہلے

حدیبیہ پیپز ملز ریفرنس ہے کیا؟

حدیبیہ پیپرز ملز شریف خاندان نے 1992 میں کمپنی آرڈیننس 1984 کے تحت قائم کی تھی۔ اس کے 7 ڈائریکٹرز تھے جن میں میاں محمد شریف، میاں شہباز شریف، عباس شریف، حمزہ شہباز شریف، حسین نواز شریف، صبیحہ عباس اور شمیم اختر شامل ہیں جبکہ کمپنی آرڈیننس کے تحت اس مل کا 30 جون 1998 میں آڈٹ ہونا تھا۔

سن 2000 میں نیب نے شریف خاندان کے خلاف اس کیس کی انکوائری کی۔ کمپنی کے دو ڈائریکٹرز میاں عباس شریف اور صبیحہ عباس کے دستخط کردہ سال 1998 کی بیلنس شیٹ آڈٹ کے لیے پیش کی گئی۔ بیلنس شیٹ میں... مزید پڑھیں
حارث افضل  11 ماه پہلے