چیئرمین نیب کی شریف فیملی کیخلاف تحقیقات 31مئی تک مکمل کرنے کی ہدایت

لاہور(مستنصر عباس) چیئرمین نیب جسٹس جاوید اقبال کی 31 مئی تک شریف فیملی اورچودھری برادران کے خلاف تحقیقات مکمل کرنے کی ہدایت، نیب لاہور نےغیر قانونی اثاثے بنانے کے الزمات پر سیاسی رہنماؤں کے گرد گھیرا تنگ کر دیا۔

 

نیب لاہور نے سیاسی رہنماؤں کی مشکلات میں اضافہ کر دیا، نیب آمدن سے زائد آثاثہ جات کیس میں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف اور ان کے بیٹے حمزہ شہبازکے خلاف غیر قانونی اثاثوں کی چھان بین کر رہا ہے، اس طرح پیراگون اسکینڈل میں ملوث خواجہ سعد رفیق بھی آمدن سے زائد اثاثوں کی انکوئری بھگت رہے ہیں۔

 

اسپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہی اور ان کے بھائی چوہدری شجاعت کے اثاثوں کی چھان بین بھی نیب میں جاری ہے جبکہ مونس الہی، عبدالعلیم خان، سلیمان شہباز، سیف الملکو کھوکھر، فاروالقاصدیق، شیخ روحیل اصغر آمدن سےزائد اثاثے بنانے کے الزمات پر نیب کے شکنجے میں پھنس چکے ہیں۔ نیب نے آمدن سے زائد اثاثوں کی تحقیقات شروع تو کیں لیکن تاحال منطقی انجام تک نہیں پہنچ سکی، اب دیکھنا یہ ہے کہ چیئرمین نیب کی ہدایات پر عملدرآمدہ وتے ہوئے 31 مئی تک تحقیقات مکمل ہوتی ہے یا نہیں۔

عطاء سبحانی  5 ماه پہلے

متعلقہ خبریں