پاکستان کا نام روشن کرنیوالی شیف فاطمہ علی کینسر سے لڑتے لڑتے زندگی کی بازی  ہار گئیں

پبلک نیوز: عزم و ہمت کی اعلیٰ مثال ، دنیا بھر میں پاکستان کا نام روشن کرنے والی  شیف فاطمہ علی کینسر سے لڑتے لڑتے زندگی کی بازی  ہار گئیں۔ شیف فاطی نے امریکا کے مشہور رئیلٹی شو "ٹاپ شیف" میں کوکنگ کے جوہر دکھائے اور سب کے دلوں میں گھر کر گئیں۔ 11جنوری کو شیف فاطی نے اپنی آخری انسٹا گرام پوسٹ میں چاہنے والوں سے دعا کی اپیل کی تھی۔

پاکستانی نژاد امریکی شیف فاطمہ علی کینسر سے لڑتے لڑتے زندگی کی بازی  ہار گئیں۔ فاطمہ علی عمر صرف29 برس تھی۔ فاطمہ علی نے امریکا کا مشہور رئیلٹی شو "ٹاپ شیف"  میں اپنی کوکنگ کے جوہر دکھائے اور تاریخ کے پنوں میں امر ہو گئیں۔

فاطمہ علی کو 2017 میں معلوم ہوا کہ وہ  ہڈیوں کے کینسر میں مبتلا ہیں۔ انھوں نے کینسر کا مقابلہ کیا اور انھیں صحت مند قرار دے دیا گیا۔ لیکن اگست 2018 میں کینسر پھر سر اٹھانے لگا۔

فاطمہ علی کو ڈاکٹرز نے بتایا کہ ان کے پاس صرف ایک سال ہے۔ فاطمہ علی نے ارادہ کیا کہ اس ایک سال میں دنیا کی سیر کرنا چاہتی ہیں اور تمام بڑے ریسٹورنٹس میں جا کر کھانا کھانا چاہتی ہیں۔

 11 جنوری کو انھوں نے انسٹاگرام پر اپنی آخری پوسٹ کی، جس میں بتایا کہ میں دن بہ دن بیمار ہو رہی ہوں۔ انھوں نے اپنے مداحوں سے خصوصی دعا کی اپیل کی۔

احمد علی کیف  5 ماه پہلے

متعلقہ خبریں