کراچی: آئل ٹینکر اُلٹنے سے آتشزدگی، وزیراعلیٰ سندھ نے واقعے کا نوٹس لے لیا

کراچی(پبلک نیوز) "گل بائی"پل پر آئل ٹینکر اُلٹنے سے آتشزدگی، ٹینکر، کنٹینرکو اوورٹیک کرتے ہوئے الٹا، دونوں بڑی گاڑیاں تباہ، 5 موٹرسائیکل اور ایک ایمبولینس بھی شعلوں کی لپیٹ میں آگئی، کوئی جانی نقصان نہیں ہوا، فائربریگیڈ کی 5گاڑیوں نےقابو پایا۔

 

شیرشاہ فلائی اوور سے نیٹی جیٹی جانے والا آئل ٹینکرز کنٹینر سے لدے ٹرک کو اور ٹیک کرتے ہوئے"گل بائی"پل پر الٹ گیا، حادثے کے بعد آئل ٹینکر میں یکدم آگ بھڑک اٹھی۔ پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔ آگ پرقابو پانے کے لیے پاکستان ایئرفورس کے 2 فائر ٹینڈرز سمیت 9 فائر ٹینڈرز، 4 واٹرباوزرز اور فوم کی دو گاڑیوں نے حصہ لیا۔ چیف فائر آفیسر تحسین احمد کے مطابق آپریشن مکمل ہونے کے بعد نقصانات کا تخمینہ لگایا جائے گا۔

 

ڈی آئی جی ٹریفک جاوید مہر نے جائے حادثے پر میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ ٹینکر کو موڑتے وقت حادثہ پیش آیا۔ سڑک کو مکمل طور پر خشک کرنے کے بعد ٹریفک کیلئے کھولا جائے گا۔ حادثے کے بعد متعدد موٹر سائیکلیں سلپ ہونے کے واقعات بھی رونما ہوئے، پولیس کے مطابق آئل ٹینکر نمبر ٹی ایل این 895 کے مالک کے بارے میں معلومات لے رہے ہیں۔ آئل ٹینکر کا ڈرائیور موقع سے فرار ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے کمشنر کراچی کو ٹیلیفون کیا اور آگ بجھانے کے اقدامات کرنے کی ہدایت بھی کی۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں