پی ٹی ایم حملہ کے زخمیوں کی عیادت کیلئے وزیراعلیٰ کے پی کی سی ایم ایچ آمد

اسلام آباد (پبلک نیوز) وزیرستان میں پی ٹی ایم کے پاک فوج کی چوکی پر حملہ کے زخمیوں کی عیادت کے لیے وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان کی سی ایم ایچ راولپنڈی آمد، وزیر اعلیٰ کا زخمی اور جاں بحق افراد کے ورثاء کو مالی معاونت فراہم کرنے کا اعلان۔

اس موقع پر ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی ایم کی جانب سے پاک فوج کی چوکی پر حملہ شرمناک عمل تھا۔ ہم اپنی فوج کے ساتھ کھڑے ہیں اور آئندہ ایسے واقعات نہیں ہونے دیں گے۔ جس وقت حملہ کی اطلاع ملی اسی وقت وزیرستان کے لئے روانہ ہو گیا۔ 15 سال دہشت گردی کا شکار رہنے کے بعد وزیرستان امن کی جانب بڑھنے لگا ہے۔

انھوں نے کہا کہ خیبر پختون خواہ میں ہماری حکومت ہے اور میں چیف ایگزیکٹو ہوں۔ پختونوں نے ہمیں ووٹ دے کر منتخب کیا۔ کوئی مسئلہ ہے تو ہیں بتائیں۔ میں اور میرا خاندان بھی دہشت گردی سے متاثر ہوئے۔ میں پشتونوں کا دکھ درد اوروں سے بہتر سمجھ سکتا ہوں۔ ریاست مخالف عناصر کو آئندہ مکمل کنٹرول کیا جائے گا۔ قبائلی علاقے کے عوام کی محرومیاں دور کریں گے۔ صوبہ کا 30 فیصد ترقیاتی بجٹ قبائلی علاقے کی ترقی پر خرچ کریں گے۔

وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا نے پروڈکشن آرڈرز سے متعلق بلاول بھٹو کے مطالبہ کو مسترد کر دیا۔ انھوں نے کہا کہ علی وزیر کے پروڈکشن آرڈرز سے متعلق فیصلہ وفاقی حکومت کو کرنا ہے۔ میری ذاتے رائے میں ایسے عناصر کے ساتھ قانون کے مطابق نمٹنا چاہیے۔

احمد علی کیف  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں