50 سال سے انتظار کی سولی پر لٹکے منصوبے مہمند ڈیم پر تیزی سے کام جاری

مہمند(حسن علی) 50سال سے انتظار کی سولی پر لٹکے منصوبے پر بالآخر عملی کام کا آغاز ہو چکا جو تیزی سے جاری ہے۔ جی ہاں مہمند ڈیم جلد مکمل ہوگا جس سے بنجر زمینیں آباد ہونگی اور علاقے میں خوشحالی کا راج ہو گا۔

 

صوبائی دارلحکومت پشاور سے 48 کلو میٹر کے فاصلے پر تعمیر ہونے جا رہا ہے مہمند ڈیم، یہ جگہ یہ رستے کبھی خوف اور دہشت کی علامت ہوا کرتے تھے تاہم اب حالات نے خوشگوار کروٹ لی ہے اور 50 سال بعد آخر کار مہمند ڈیم پر کام کا تیزی سے آغاز کر دیا گیا ہے۔ مہمند ڈیم کے 4 بڑے فوائد ہیں، جن میں پشاور نوشہرہ اور چارسدہ سمیت مردان کو سیلاب سے بچانا، 800 میگاواٹ سستی پن بجلی سسٹم میں شامل کرنا، سالانہ اربوں روپے کا فائدہ اور پشاور کو پینے کے صاف پانی کی فراہمی سمیت بنجر زمینوں کو زرخیز بنانا ہے۔

 

مہمند ڈیم میں موسمیات کے حوالے سے جدید آلات کی تنصیب، واٹر لیول چیکنگ سسٹم اور کئی دیگر اہم کام پہلے ہی کر لئے گئے ہیں۔ اس ڈیم کے بننے سے جہاں قومی خزانے کو سالانہ اربوں روپوں کا فائدہ ہونے کی پیشن گوئی ہے وہاں یہ بھی واضح کیا گیا ہے کہ پانی و بجلی کی قلت پر قابو پانے میں بھی کافی مدد ملے گی۔

عطاء سبحانی  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں