بینک اکاؤنٹس ڈیٹا چوری اسکینڈل سے صارفین میں تشویش کی لہر دوڑ گئی

اسلام آباد(پبلک نیوز) بینک اکاؤنٹس ڈیٹا چوری اسکینڈل کے منظر عام پر آنے کے بعد صارفین میں تشویش کی لہر دوڑ گئی۔ ایف آئی اے اور اسٹیٹ بینک کی جانب سے تمام بینکوں کے اے ٹی ایم ہولڈرز کو اپنا پن کوڈ تبدیل کرنے اور کسی کو بھی فون پر بینک اکاؤنٹ سے متعلق تفصیلات فراہم نہ کرنے کی ہدایت۔

 

بینک اکاونٹس ڈیٹا چوری اسکینڈل نے ملک کو ہلا کر رکھ دیا، بینک اکاؤنٹس ڈیٹا چوری اسکینڈل کے منظر عام پر آنے کے بعد صارفین میں تشویش کی لہر دوڑ گئی۔ صارفین نے اپنے اکاؤنٹس سے متعلق بینکوں سے رابطے بڑھا دیئے۔ ایف آئی اے اور اسٹیٹ بینک نے ہیکرز سے صارفین کے بینک اکاونٹس محفوظ بنانے کے لئے سرجوڑ لئے۔

 

بینکوں کو ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ وہ اپنے آئی ٹی سسٹم کو مزید موثر بنائیں جبکہ صارفین کسی بھی پریشانی سے بچننے کے لئے فوری طور پر اپنے اے ٹی ایم کا پن کوڈ تبدیل کریں۔ ایف آئی اے کے ڈپٹی ڈائریکٹر میاں خرم یوسف کا کہنا تھا کہ ایسے ملزمان کے خلاف ملک بھر میں کارروائیاں کی جا رہی ہیں اور ایف آئی اے اسے روکنے کے بہتر اقدامات کر رہی ہے۔

 

ایف آئی اے اور اسٹیٹ بینک کی جانب سے ہدایت کی گئی کہ صارفین کسی کو بھی فون پر بینک اکاؤنٹ سے متعلق تفصیلات فراہم نہ کریں۔ بینک اکاؤنٹس ڈیٹا چوری اسکینڈل نے ایف آئی اے سائبر کرائم سیل اور اسٹیٹ بینک کی کارکردگی پر کئی سوالات اٹھا دیئے ہیں؟ شہریوں نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس سنگین مسلہ پر قوم کو اعتماد میں لیں اور اس اسکینڈل سے متعلق اصل صورتحال سے آگاہ کریں۔

عطاء سبحانی  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں