وزیراعظم نیوزی لینڈ جیسنڈا آرڈرن کو جان سے مارنے کی دھمکیاں

پبلک نیوز: نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جیسنڈا آرڈرن کو سوشل میڈیا پر جان سے مارنے کی دھمکیاں ملنے کا انکشاف ہوا ہے۔

 

میڈیا رپورٹس کے مطابق نیوزی لینڈ کی وزیراعظم کو سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر دھمکیاں دی گئیں۔ اس واقعے کے بعد پولیس معاملے کی تحقیقات کر رہی ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق وزیر اعظم کو ٹوئٹر پر پیغام دیا گیا کہ "اس کے بعد آپ کی باری ہے"۔ پیغام کے ساتھ ایک بندوق کی تصویر بھی بھیجی گئی۔

یہ خبر پڑھیں: کرائسٹ چرچ میں مسلمانوں سے اظہاریکجہتی، اذان و خطبہ جمعہ ٹی وی پر نشر

دھمکی دینے والے شخص کے ٹوئٹر اکاؤنٹ معطل ہونے سے 48 گھنٹے قبل اس تصویر کو پوسٹ کیا گیا تھا، تاہم مختلف لوگوں کی جانب سے اسے رپورٹ کرنے کے بعد اکاؤنٹ کو معطل کر دیا گیا۔ اس کے علاوہ جیسنڈ آرڈرن اور نیوزی لینڈ پولیس کو مخاطب کرتے ہوئے پوسٹ کی گئی ایک اور  تصویر میں "اگلے آپ ہیں" لکھا ہوا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: مسلمان اس جمعہ کی نماز پڑھیں، ہم ان کے ساتھ حفاظت کیلئے کھڑے ہوں گے: کیوی وزیراعظم

ٹوئٹر کی طرف سے معطل کیے گئے اکاؤنٹ پر اسلام مخالف مواد اور سفید فام نفرت انگیز تقاریر موجود تھیں۔ اس حوالے سے پولیس کی ترجمان نے ہیرالڈ کو بتایا کہ "پولیس ٹوئٹر پر کیے جانے والے تبصروں سے باخبر ہے اور انکوائریز عمل میں لائی جارہی ہیں"۔

حارث افضل  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں