بیوروکریٹس کیخلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات کے الزام پر کارروائی کا فیصلہ

لاہور(ادریس شیخ) بیوروکریسی کے خلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات کا الزام، اثاثوں سے متعلق تفصیلات فراہم نہ کرنے والے افسران کے خلاف کارروائی پر غور، منظوری کے بعد اسٹیبلشمنٹ ڈویژن اور ایس اینڈ جی اے ڈی پنجاب کی جانب سے کارروائی کی جائے گی۔

 

ذرائع کے مطابق وفاقی اور صوبائی حکومت کی جانب سے منظوری کے بعد افسران کے خلاف محکمانہ کارروائی کی جائے گی، گزشتہ برس وفاقی اور صوبائی حکومت کی جانب سے افسران کو اثاثوں سے متعلق تفصیلات فراہم کرنے کی ہدایت کی گئی، مگر اسٹیبلشمنٹ ڈویژن اور ایس اینڈ جی اے ڈی کے مراسلوں کے باوجود سرکاری افسران نے اثاثوں سے متعلق تفصیلات فراہم کرنے کی ہدایت نظر انداز کر دی اور اکثریت نے اثاثوں سے متعلق تفصیلات اسٹیبلشمنٹ ڈویژن اور ایس اینڈ جی اے ڈی کو فراہم نہیں کیں۔

 

ذرائع کے مطابق بیوروکریٹس کے خلاف مبینہ کرپشن کے ذریعے آمدن سے زائد اثاثہ جات رکھنے کا الزام ہے، افسران سے بنیادی تنخواہ، مراعات، اخراجات، بیرون ملک سفر اور بچوں کی تعلیم سے متعلق تفصیلات، زیر ملکیتی جائیداد، بنک اکاؤنٹس، گاڑیوں اور زیورات کی مالیت سے متعلق بھی تفصیلات مانگی گئی تھیں، جو کہ تاحال فراہم نہیں کی گئیں۔

عطاء سبحانی  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں