سیکیورٹی فورسز نے دہشت گردی کیخلاف جنگ کامیاب بنائی: ڈی جی آئی ایس پی آر

راولپنڈی(پبلکن نیوز) ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے کہا بھارت سرجیکل اسٹرائیک کرتا تو مانتے۔ صرف باتوں سے سرجیکل اسٹرائیک نہیں ہوتی۔ دہشت گردی کیخلاف جنگ ریاست، افواج پاکستان اورعوام نے مل کر لڑی۔

 

نجی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ ریاست، افواج پاکستان اورعوام نےمل کرلڑی، نئی جنگ پاکستان کی ترقی کی جنگ ہے۔ ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے واضح کر دیا کہ پاک فوج میں احتساب کا نظام بہت سخت ہے، میں پبلک آفس ہولڈر نہیں، میرا احتساب فوج کے قانون کے مطابق ہو گا۔

 

میجر جنرل آصف غفور نے پاک فوج کے فلاحی کاموں کا تذکرہ کیا اور کہا کہ پاک فوج شہیدوں کو نہیں بھولتی، شہیدوں کے نام کا پیسہ صرف شہیدوں پر خرچ ہوتا۔ انہوں نے کہا کہ پاک فوج سب سے زیادہ ٹیکس دینے والا ادارہ ہے۔ ڈی جی آئی ایس پی آر نے بھارت کو کھری کھری سنا دیں۔ انہوں نے کہا کہ بھارت سرجیکل اسٹرائیک کرتا تو مانتے، صرف باتوں سے سرجیکل اسٹرائیک نہیں ہوتی۔ میجرجنرل آصف غفور نے کہا اس وقت میڈیا پاکستان کامضبوط ستون ہے۔ پاک فوج کو جتنی سپورٹ میڈیا نے دی اس کی مثال نہیں ملتی۔

 

ترجمان پاک فوج کے مطابق سیکیورٹی فورسز نے دہشتگردی کیخلاف جنگ کامیاب بنائی، پچھلی دو دہائیوں میں مشکل سفر طے کیا ہے کیوں کہ دہشتگردی کے خلاف جنگ بہت مشکل سفر تھا۔ پچھلے 2 برس میں 75ہزار سے زائد خفیہ آپریشن کیے گئے ہیں، اس دوران بڑی تعداد میں غیرقانونی اسلحہ برآمد ہوا۔ آپریشن ردالفساد میں بہت پیش رفت ہوئی ہے، ردالفساد کا مقصد ہے ایسا ملک ہو جہاں قانون وآئین کی حکمرانی ہو اور ردالفساد کے ذریعے پاکستان میں قانون کی بالادستی دیکھ رہے ہیں۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں