دل کا مرض نواز شریف کی زندگی کے لئے خطرہ ہے: ڈاکٹر عدنان

لاہور(خالد محمود خالد) سابق وزیراعظم نواز شریف کا شریف میڈیکل سٹی میں چھٹی بار معائنہ، آغا خان میڈیکل یونیورسٹی کے ماہر ڈاکٹروں کی ٹیم نے نواز شریف کا ایک گھنٹے تک معائنہ کیا، ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان کا کہنا ہے کہ دل کا مرض نواز شریف کی زندگی کے لئے خطرہ ہے۔

 

سابق وزیراعظم نواز شریف علاج کے لئے ضمانت ہر رہائی کے بیسویں روز چھٹی بار شریف میڈیکل سٹی پہنچے، جہاں کراچی سے خصوصی طور پر آئی ہوئی ڈاکٹروں کی ٹیم نے ان کا طبی معائنہ کیا، آغا خان یونیورسٹی کے ڈاکٹروں نے میڈیکل رپورٹ کا جائزہ لیا اور مشاورت کی گئی۔ ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے کہا کہ سابق وزیراعظم کو کئی امراض لاحق ہیں لیکن دل کا مرض ان کی زندگی کے لئے سب سے بڑا خطرہ ہے۔

 

ڈاکٹر عدنان نے کہا کہ ان کی انجیوپلاسٹی یا اوپن ہارٹ سرجری کی جاسکتی ہے کیونکہ دل کا مرض نواز شریف کے لئے سب سے بڑا خطرہ ہے۔ نواز شریف کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے کہا کہ نواز شریف کا ڈاکٹروں کی زیر نگرانی علاج جاری ہے، جب ضرورت محسوس ہو گی انہیں ہسپتال داخل کر دیا جائے گا۔ نواز شریف کی ضمانت کی مدت ختم ہونے میں بائیس روز باقی ہیں لیکن ڈاکٹروں کی ٹیم فیصلہ نہیں کر سکی کہ پاکستان یا بیرون ملک ان کا باقاعدہ علاج کب شروع ہو گا۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں