ڈونلڈ ٹرمپ کا وزیراعظم کو خط، طالبان سے مذاکرات کیلئے تعاون مانگ لیا

اسلام آباد(پبلک نیوز) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا وزیراعظم عمران خان کو خط، ڈونلڈ ٹرمپ نے طالبان کو مذاکرات کی میز پر لانے کے لئے تعاون مانگ لیا۔ وزیراعظم عمران خان کی سینٹر صحافیوں و اینکرز سے ملاقات۔

 

وزیراعظم عمران خان کی آج سینئر صحافیوں اور اینکرز سے ملاقات ہوئی، ملاقات میں ملکی صورتحال پر بات چیت کی گئی اور انہوں نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے موصول ہوا خط کے حوالے سے بھی ذکر کیا۔ وزیراعظم عمران خان نے سینئر صحافیوں سے غیررسمی ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے طالبان کو مذاکرات کی میز پر لانے کے لئے تعاون مانگا ہے۔

 

وزیراعظم عمران خان نے بتایا کہ امریکی صدر نے اپنے خط میں دہشت گردی کے خلاف پاکستان کے کردار کی تعریف کی۔ امریکہ نے افغان طالبان کو مذاکرات کی میز پر لانے کیلئے پاکستان سے تعاون مانگا ہے۔ امریکا کو پتا چل گیا ہے کہ افغانستان میں پاکستان کے بغیر امن قائم نہیں ہو سکتا اور افغانستان میں قیام امن کیلئے ہر ممکن کردار ادا کریں گے۔ ماضی میں امریکا کے ساتھ معذرت خواہانہ رویہ اپنایا گیا لیکن اب ہم نے امریکا کو برابری کی سطح پر جواب دیا۔


وزیراعظم کا کہنا تھا کہ نیب ایک آزاد ادارہ ہے اور سٹیبلشمنٹ سے تعلقات خراب نہیں کرنا چاہتے۔ ہمیں ملکی معیشت بدحالی کا شکار ملی ہے۔ یوٹرن عظیم لوگ ہی لیتے ہیں۔ کرتار پور بارڈر دھوکہ دینے لئے نہیں، بھارت کے منفی پروپیگنڈے کے جواب میں کرتار پور کھولا گیا۔

 

وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ ڈالر مہنگا ہونے کی خبر ٹی وی پر دیکھی، اسٹیٹ بینک نے ڈالر کی قیمت پوچھے بغیر خود سے بڑھائی۔ اس معاملے پر غور کر رہے ہیں کہ اسٹیٹ بینک اپنے طور پر ڈالر کی قدر بڑھانے کا فیصلہ نہ کرے۔ پاکستان اور بھارت چاہیں تو مسئلہ کشمیر حل ہو سکتا ہے۔ زلفی بخاری کی تقرری میں اقربا پروری کے الزام پر افسوس ہے۔

عطاء سبحانی  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں