حمزہ شہباز، سلمان شہباز کا مزید کاروباری وسعت کا خواب ادھورا ہی رہ گیا

لاہور(ادریس شیخ) حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کی مشکلات میں مزید اضافہ ہو گیا، سلمان اور حمزہ شہباز نے ڈسٹل ری فیکٹری قائم کرنے کا منصوبہ بنایا مگر منی لانڈرنگ انکوائری کی وجہ سے کام روک دیا گیا۔

 

حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کا مزید کاروباری وسعت کا خواب ادھورا ہی رہ گیا، ذرائع کے مطابق سلمان شہباز اور حمزہ شہباز کی ڈسٹل ری فیکٹری کیلئے تمام تیاریاں مکمل تھیں، مگر نیب کیسز کی وجہ سے رقوم کی ترسیل رک گئی، شہباز شریف کے صاحبزادوں نے ڈسٹل ری فیکٹری کے ذریعے ایتھانول کی تیاری کا منصوبہ بنایا تھا، ذرائع کے مطابق حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کا سویابین، کینولہ اور سورج مکھی کے بیج سے تیل نکالنے کی فیکٹری کا منصوبہ بھی زیر تکمیل تھا مگر کام رک گیا۔

نیب کی جانب سے مبینہ فرنٹ مین کی گرفتاری اور شریک افراد کے خلاف تفتیش سے رقوم کا بندوبست کرنے والے افراد زیر زمین چلے گئے۔ نیب شہباز شریف، حمزہ شہباز، سلمان شہباز اور شہباز شریف کی اہلیہ کے خلاف منی لانڈرنگ کے الزامات کے تحت انکوائری شروع کی ہے، انکوائری میں جعلی بنک اکاؤنٹس کے ذریعے اربوں روپے وصول کرنے کا الزام ہے۔

عطاء سبحانی  4 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں