آئندہ مالی سال کیلئے ایف بی آر کا ہدف 5550 ارب روپے مقرر کرنے کی تجویز

اسلام آباد (پبلک نیوز) فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) میں نئےمالی سال کے فنانس بل کی تیاری کا عمل تیزی سے جاری، حکام کا بڑے پیمانے پر ٹیکس چھوٹ ختم اور نئے سیکٹرز کو ٹیکس میں لانے پر غور جاری۔

ذرائع کے مطابق ایف بی آر حکام کی جانب سے بڑے پیمانے پر ٹیکس چھوٹ ختم اور نئے سیکٹرز کو ٹیکس میں لانے پر غور جاری کیا جا رہا ہے۔ نئے بجٹ میں تعلیمی اداروں اور ہسپتالوں کو بھی ٹیکس نیٹ میں لانے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

ایف بی آر حکام تعلیمی اداروں اور ہسپتالوں کی آمدنی پر انکم ٹیکس عائد کرنے کی تجویز پر غور کر رہے ہیں۔ بیوٹی پارلرز کو بھی انکم ٹیکس عائد کرنے پر بھی غور جاری ہے۔ جیولری کا کاروبار کرنے والوں کو بھی ٹیکس نیٹ لانے پر غور جاری ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ کس شعبے پر کتنا انکم ٹیکس عائد ہو گا، حتمی فیصلہ وزیراعظم کی منظوری پر ہی ہو گا۔ آئندہ مالی سال کے لیے ایف بی آر کا ہدف ساڑھے پچپن سو ارب روپے مقرر کرنے کی تجویز ہے۔

احمد علی کیف  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں