وزیرصحت عامر کیانی نے جعلی ڈاکٹرز کے خلاف کارروائی کیلئے کمر کس لی

اسلام آباد(پبلک نیوز) جعلی ڈاکٹرز کے لئے آخری انتباہ ۔ بوریا بستر گول خود کرلیں ورنہ اس بار قانون کے شکنجے سے نکلنا مشکل ہی نہیں ناممکن ہوگا۔ وزیر صحت عامر کیانی، چئیرمین سینٹ کمیٹی برائے قومی صحت میاں عتیق نے جعلی ڈاکٹرز کے خلاف کمر کس لی۔

 

دو ماہ قبل پمز اسلام آباد جعلی ڈاکٹر پکڑے جانے کے واقعے کی گونج، پارلیمنٹیرینز کی آنکھیں کھل گئیں۔ جعلی ڈاکٹرز کے خلاف سب ہی برسرپیکار۔ وفاقی وزیر صحت عامر کیانی نے اشارہ دے دیا ہے، جعلی ڈاکٹرز کے گرد گھیرا تنگ ہو گا۔ معموم شہریوں کی زندگی سے کھیلنے والے جعلی ڈگری ڈاکٹرز بے نقاب ہوں گے۔ اسلام آباد کے چاروں سرکاری ہسپتال میں کام کرنے والے ڈاکٹرز کی ڈگریوں کی جلد ہی تصدیق کی جائے گی۔

 

وفاقی وزیر صحت عامر کیانی چاروں سرکاری ہسپتالوں کو الٹی میٹم دیں گے۔ وفاق کے چاروں ہسپتالوں میں ڈاکٹرز کی تعداد دو ہزار سے زیادہ ہے۔ ذرائع کے مطابق وزرات صحت سے چاروں ہسپتالوں ڈاکٹر کی ڈگریوں کی جلد تصدیق کا مراسلہ ارسال کیا جائے گا ۔ پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینل کونسل ڈاکٹرز کی ڈگریوں کی تصدیق کرے گی۔ سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے قومی صحت کے چیئرمین سینٹر میاں عیتق نے بھی جلعی ڈاکٹرز کی پکڑ کے لئے میدان میں سینٹر کلثوم پروین نے بھی پمز میں جعلی ڈاکٹر واقعے میں ملوث اصل کرداروں کو بے نقاب کرنے کا عندیہ بھی دے دیا۔

 

عطاء سبحانی  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں