منی لانڈرنگ کیس، خدمت خلق فاؤنڈیشن کی ساڑھے 3 ارب مالیت کی 29 جائیدادیں ضبط

کراچی (ضمیر علی) خدمتِ خلق کے نام پر منی نام لانڈرنگ، خدمتِ خلق فاؤنڈیشن وفاقی تحقیقاتی ادارہ (ایف آئی اے) کے نرغہ میں آ گئی۔ بھتے سے جائیدادیں بنائیں۔ کرایہ شہدا کو ورثا کو دیا۔ منی لانڈرنگ کیس میں متحدہ پاکستان (ایم کیو ایم) کی خدمت خلق فاؤنڈیشن کی ساڑھے 3 ارب مالیت کی 29 جائیدادیں ضبط کر لی گئیں۔

ایف آئی اے کے مطابق خدمت خلق فاؤنڈیشن کی جائیدادیں بھتے کی رقم سے بنائی گئیں۔ جائیدادوں سے حاصل ہونے والی رقم 2 بڑے کاموں میں استعمال ہوتی تھی۔ رقم 6 کے قریب سہولت کاروں کے ذریعہ لندن بھجوائی جاتی تھی۔

سہولت کاروں میں بابر غوری، سہیل منصور، سینیٹر احمد علی، دیگر شامل تھے۔ ایف آئی اے کے مطابق کرائے کی مد میں شہدا اور اسیران کے خاندانوں کو منتقل کی جانے والی رقم نہیں روکی گئی۔ خدمت خلق فاؤنڈیشن کی جائیدادیں بھتے کی رقم سے بنائی گئیں۔

احمد علی کیف  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں