شادی کے بعد لڑکیوں سے جسم فروشی کروانے والے 8 چینی گرفتار، ایف آئی اے

لاہور (پبلک نیوز) چینی باشندوں کی جانب سے پاکستانی لڑکیوں سے شادی کرکے فروخت کرنے کے معاملہ میں وفاقی تحقیقاتی ادارہ (ایف آئی اے) نے کریک ڈاون کرتے ہوئے 8 چینی گرفتار کر لیے۔

 

تفصیلات کے مطابق ایف ائی اے نے لاہور سمیت دیگر علاقوں میں چائنز نوجوانوں کے خلاف کریک ڈاؤن کیا۔ ڈائریکٹر جنرل بشیر میمن کی ہدایت پر ڈائریکٹر زون 2 رستم چوہان نے کارروائیاں کیں۔ ڈپٹی ڈائریکٹر جمیل میو کی سربراہی میں ٹیم نے کارروائی کی۔

 

ایف آئی اے نے ڈیوائن ہومز میں کارروائی کرتے ہوئے 8 چائیز گرفتار کر لیے۔ چینی باشندوں نے پاکستانی ایجنٹوں کے ساتھ مل کر پاکستانی لڑکیوں سے شادی کرتے تھے۔ شادی کے بعد ان لڑکیوں سے جسم فروشی کا دھندہ کرایا جاتا تھا۔

 

ایف آئی اے اس سکینڈل مین اب تک مجموعی طور پر 10 چینی لڑکوں کو گرفتار کر چکا ہے۔ ملزمان وانگ ہاؤ، شوئی شیلی، وانگ یزہو، چانگ شیل رائے، پن کھوا جے، وانگ باؤ، زوا تھی اور خاتون کین ڈس کو گرفتار کیا جا چکا ہے۔

حارث افضل  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں