کراچی میں مفتی تقی عثمانی کی گاڑی پر فائرنگ، گارڈ جاں بحق

کراچی (پبلک نیوز) شہر قائد میں ٹارگٹ کلنگ ایک بار پھر سے شروع ہو گئی۔ نیپاچورنگی اور نرسری میں گاڑیوں پر فائرنگ میں پولیس اہلکار سمیت 2 محافظ جاں بحق ہوگئے، مولانا عامر شہاب شدید زخمی جبکہ مفتی تقی عثمانی محفوظ رہے۔

 

تفصیلات کے مطابق کراچی میں آدھے گھنٹے کے دوران فائرنگ کے 2 واقعات میں 2 افراد جاں بحق جبکہ 2 زخمی ہوگئے۔ پہلا فائرنگ کا واقعہ نیپا پل کے قریب پیش آیا جہاں موٹر سائیکل پر سوار نامعلوم ملزمان نے دارالعلوم کراچی کی گاڑی پر اندھا دھند فائرنگ کی جس کے نتیجے میں 2 افراد جاں بحق ہوگئے۔ دوسرا واقعہ شاہراہ فیصل پر نرسری کے قریب پیش آیا جہاں نامعلوم ملزمان نے دارالعلوم کراچی کی ہی گاڑی کو نشانا بنایا جس میں مفتی تقی عثمانی سوار تھے، فائرنگ کے نتیجے میں ان کا گارڈ جاں بحق ہوگیا تاہم مفتی تقی عثمانی محفوظ رہے۔

 

فائرنگ کے واقعے میں زخمی ہونے والے مولانا عامر شہاب کو جناح اسپتال منتقل کردیا گیا۔ پولیس حکام کے مطابق فائرنگ کے واقعے میں جاں بحق ہونے والے سیکیورٹی گارڈ کی شناخت صنوبرخان کے نام سے ہوئی ہے۔

 

حارث افضل  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں