11 فروری، معروف اداکار قاضی واجد کو یاد کرنے کا دن

کراچی (پبلک نیوز) منفرد انداز، آواز اور جاندار اداکاری سے لاکھوں شائقین کے دلوں پر راج کرنے والے قاضی واجد کو یاد کرنے کا دن۔ 50 برس تک ریڈیو اور ٹیلی ویژن پر اپنے فن کا لوہا منوانے والے قاضی واجد کی آج پہلی برسی منائی جارہی ہے۔

 

قاضی واجد کا اصل نام عبدالواجد انصاری تھا۔ جو 26 مئی 1943 کو بھارتی شہر گوالیار میں پیدا ہوئے اور قیام پاکستان کے بعد کراچی میں سکونت اختیار کی۔ قاضی واجد نے 10 برس کی عمر میں ہی فنی کیرئیر کا آغاز کر دیا اور پہلی مرتبہ ریڈیو پاکستان پر بچوں کے پروگرام نونہال میں صدا کاری کے جوہر دکھائے۔ قاضی واجد 60 کی دہائی میں پاکستان ٹیلی ویژن سے منسلک ہوگئے۔ ڈرامہ سیریل 'خدا کی بستی' میں جاندار اداکاری نے انہیں شہرت کی بلندیوں تک پہنچا دیا۔

 

یوں تو قاضی واجد نے ٹیلی ویژن پر ان گنت کردار ادا کیے تاہم دھوپ کنارے، ان کہی، تنہائیاں، حوا کی بیٹی چاند گرہن، پل دو پل، تعلیم بالغاں اور 'انارکلی'  میں ان کی یادگار کارکردگی بھلائی نہ جاسکے گی۔

 

فن کے لیے غیر معمولی خدمات پر حکومت پاکستان نے  قاضی واجد کو 14 اگست 1988ء کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی سے نوازا۔ قاضی واجد کئی برس دل کے عارضے میں مبتلا رہنے کے بعد 11 فروری 2018 کو کراچی میں خالق حقیقی سے جا ملے۔

حارث افضل  6 ماه پہلے

متعلقہ خبریں