بہاولپور میں پسند کی شادی کا تنازع 4 افراد کی جان لے گیا

بہاولپور(وحید احمد) بہاولپور میں پسند کی شادی پر خون کی ہولی، لڑکی کے رشتے داروں نے فائرنگ کر کے لڑکے کے والد، بھائی اور ماموں سمیت 4 افراد کو ہلاک اور دلہن سمیت 3 کو زخمی کر دیا، ملزم فرار ہو گئے۔

 

بہاولپور میں غیرت کے نام پر خون کی ہولی کھیلی گئی۔ پسند کی شادی کا تنازع 4 افراد کی جان لے گیا۔ بہاولپور کے قریب خیر پور ٹامیوالی میں لڑکی کے رشتے داروں نے فائرنگ کر کے لڑکے کے والد، بھائی اور ماموں سمیت 4 افراد کو ہلاک کر دیا۔ دلہن سمیت 3 افراد زخمی ہوئے۔ واردات کے بعد ملزم فرار ہو گئے۔

 

پولیس کے مطابق محمد راشد نے کچھ عرصہ قبل سمبڑیال سیالکوٹ کی رہائشی عائشہ نامی لڑکی سے پسند کی شادی کی، لیکن لڑکی کے اہل خانہ کو یہ منظور نہ تھا، دلہن کی والدہ شگفتہ بی بی نے اپنی بیٹی کے اغواء کا مقدمہ درج کرایا تھا، جو لڑکی کے عدالت میں بیان کے بعد خارج کر دیا گیا تھا۔ مقتولین کے ورثاء نے حاصل پور روڈ بلاک کر کے احتجاج کیا۔ پولیس ملزموں کی گرفتاری کے لیے چھاپے مار رہی ہے۔

عطاء سبحانی  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں