شریف خاندان کے فرنٹ مین مشتاق چینی کا طبی سہولیات کیلئے عدالت سے رجوع

لاہور(شاکر محمود اعوان) نواز شریف اور شہباز شریف کے بعد ان کے فرنٹ مین مشتاق چینی بھی نیب کی حراست میں بیمار ہو گئے۔ مشتاق چینی نے علاج اور گھر کے کھانے کے لیے عدالت سے رجوع کر لیا۔ عدالت نے نیب کو قانون کے مطابق کاررروائی کی ہدایت کر دی۔

 

حکومت ہو یا اپوزیشن اراکین، نیب کی حراست میں سبھی جا کر سبھی بیمار ہو جاتے ہیں۔ پھر طبی بنیادوں پر ضمانت کے لیے سپریم کورٹ اور ہائیکورٹ سے رجوع کیا جاتا ہے۔ نوازشریف اور شہبازشریف کے بعد اب حمزہ اور سلمان شہباز کیلئے منی لانڈرنگ کے الزام میں گرفتار مشتاق چینی کے ساتھ بھی کچھ ایسا ہی ہوا۔ نیب نے پکڑا تو لاتعداد بیماریوں نے اٹیک کر دیا۔ مشتاق چینی نے طبی سہولیات کے لیے احتساب عدالت میں درخواست دے دی۔

 

مشتاق چینی نے درخواست میں مؤقف اپنایا کہ وہ عارضہ قلب، شوگر، گردوں میں پھتری اور بلڈ پرییشر سمیت دیگر بیماریوں کا شکار ہیں۔ درخواست میں نشاندہی کی گئی کہ ڈاکٹرز نے انہیں پرہیزی کھانا کھانے کی ہدایت کی ہے۔ اس لیے انہیں گھر سے کھانا لانے کی اجازت دی جائے۔ درخواست میں یہ بھی استدعا کی گئی کہ مشتاق چینی کو بیماری کے پیش نظر روزانہ کی بنیادوں پر میڈیکل چیک اپ کرانے کی اجازت دی جائے۔ احتساب عدالت نے جج جواد الحسن نے مشتاق چینی کی درخواست منظور کرتے ہوئے نیب حکام کو قانون کے مطابق عملدرآمد کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں