وفاقی حکومت وعدوں پر قائم، وزیر اعلی سندھ  نے ہوم ورک کے بغیر بات کی: گورنر سندھ

کراچی (پبلک نیوز) گورنر سندھ عمران اسمعاعیل نے کہا ہے کہ ہر مشکل میں وفاقی حکومت سندھ کی عوام کے ساتھ کھڑی ہو گی۔ سندھ کو آئل اینڈ گیس کی رائلٹی کی مد میں 332 ارب روپے وفاق نے دیئے۔ لاڑکانہ میں ایچ آئی وی کی صورتحال پر وفاق بھرپور مدد فراہم کر رہا ہے۔

سندھ گورنر ہاؤس میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ گرین لائن سروس اس سال کے آخر تک شروع ہو جائے گی۔ وفاقی حکومت کی طرف دیکھتے ہیں اور تنقید بھی کرتے ہیں۔ وفاقی حکومت اپنے تمام وعدوں پر قائم ہے۔ کل وزیر اعلی سندھ نے کئی چیزوں کی نشاندہی کی۔ وزیر اعلی سندھ  نے بغیر ہوم ورک کے بات کی۔

انھوں نے کہا کہ کراچی میں پانچ سو نئی بسیں چلائی جائیں گی۔ سکھر حیدرآباد موٹروے پر 250 ارب روپے لاگت آئے گی۔ وفاقی حکومت کے منصوبے اس سال مکمل ہو جائیں گے۔ ان منصوبوں کا افتتاح وزیر اعظم عمران خان کریں گے۔ پی ایس ڈی پی 8 سو بین، سے کم ہو کر 675 بلین پر آیا ہے۔ جس سے کوئی ایک صوبہ نہیں چاروں صوبے متاثر ہوئے ہیں۔

عمران اسماعیل کا کہنا تھا کہ سندھ حکومت کو ملنے والی اطلاعات ٹھیک نہیں ہیں۔ ہر مشکل میں وفاقی حکومت سندھ کی عوام کے ساتھ کھڑی ہوگی۔ وفاقی حکومت کی طرف دیکھتے ہیں اور تنقید بھی کرتے ہیں۔ کراچی کے تین اسپتال وفاقی حکومت کی ملکیت تھے۔ یہ اسپتال عدالت کے حکم پر واپس وفاق کو چلے گئے۔ سندھ حکومت دوسرے اسپتالوں کو دیکھے وہاں کام کی ضرورت ہے۔

احمد علی کیف  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں