خسرہ کے کیسز میں تشویش ناک اضافہ،وزیرصحت کی خصوصی اقدامات کیلئے ہدایت

اسلام اباد(پبلک نیوز) ملک بھر میں خسرہ کے کیسز میں تشویش ناک اضافہ ہو گیا۔ والدین کی طرف سے بچوں کو خسرے کا حفاظتی ٹیکہ لگوانے کے رجحان میں کمی خسرہ پھیلنے کی بڑی وجہ بن گئی۔ رواں سال جنوری سے اگست تک دو سو سولہ بچے خسرے کی نظر ہو گئے۔

ملک میں خسرے کا بڑھتا ہوا مرض خطرے کی گھنٹی ہے۔ وزارت صحت کے جلد از جلد اقدامات کرنا ناگزیر ہو گیا۔ رواں سال اب تک خسرہ کے 97 ہزار 464 کیسز سامنے آچکے ہیں۔ والدین کی بچوں کو خسرہ کے ٹیکے لگوانے کے رجحان میں کمی خسرہ پھیلنے کی بڑی وجہ بن گئی ہے۔

 

ذرائع کے مطابق رواں سال پنجاب میں 11 ہزار 139 بچے، سندھ میں 7 ہزار 383، خیبرپختونخوا میں 9 ہزار 875 جبکہ بلوچستان میں اب تک 1 ہزار 367 بچے خسرہ کا شکار ہوئے۔ رواں سال جنوری سے اگست تک دو سو سولہ بچے خسرے کی نظر ہو گئے۔ 90 فیصد کے بجائے صرف 73 فیصد والدین بچوں کو خسرہ کے ٹیکے لگواتے ہیں۔ وزیر صحت نے خسرہ سے بچاو کے لئے خصوصی اقدامات کرنے کی ہدایت کر دی۔

عطاء سبحانی  9 ماه پہلے

متعلقہ خبریں