چوہدری برادران کیخلاف انکوائری بند کرنے کے کیس کی سماعت 30اپریل تک ملتوی

لاہور(ناصر نقوی) احتساب عدالت نے چوہدری پرویز الہی اور چودہدری شجاعت حسین کے خلاف نیب انکوائری بند کرنے کے کیس میں نیب کے تفتیشی افسر سے آئندہ سماعت پر مکمل رپورٹ طلب کر لی۔

 

احتساب عدالت کے جج جواد الحسن نے نیب کی چوہدری برادران کے خلاف انکوئری بند کرنے کی درخواست پر سماعت کی۔ چوہدری برادرن کے وکیل نے مؤقف اختیار کیا کہ نیب کی تحقیقات میں چوہدری برادرن کا کوئی کردار سامنے نہیں آیا اور نیب نے بھی انکوائری بند کرنے کی سفارش کی ہے۔ عدالت نے استفسار کیا کہ کیا شریک ملزم نواز اور اقبال کو بھی بری کرنا ہے، جس پر امجد پر پرویز نے دلائل دیئے کہ ریکارڈ کے مطابق نامزد ملزم نواز اور اقبال نے کوئی فائدہ حاصل نہیں کیا۔

 

دوران سماعت نیب کے تفتیش افسر نے بتایا کہ چوہدری پرویز الہی اور چوہدری شجاعت حسین کیخلاف نجی ہاؤسنگ سوسائٹی میں غیر قانونی طور پر پلاٹس فروخت کرنے کا الزام تھا۔ تحقیقات کے دوران معلوم ہوا کہ یہ پلاٹس چوہدری برادران کے ملازم نے خریدے چوہدری برادران کا اس سے تعلق نہیں، جس بنا پر چوہدری بردران پر 28 پلاٹس کے غیر قانونی فروخت کی تحقیقات بند کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔عداالت نے ائندہ سماعت نیب کے تفتیشی کو مکمل رپورٹ جمع کرانے کی ہدایت کرتے ہوئے کیس کی مزید سماعت 30 اپریل تک ملتوی کر دی۔

عطاء سبحانی  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں