شہباز شریف کے خلاف رمضان شوگر ملز کیس کی سمات 26 جون تک ملتوی

لاہور(شاکر اعوان) آشیانہ اقبال اسکینڈل اور رمضان شوگر ملز کیس میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف لاہور کی احتساب عدالت میں پیش ہوئے۔ کیس کی سماعت 26 جون تک ملتوی کر دی گئی۔ شہباز شریف حاضری لگا کر واپس روانہ ہو گئے۔ عدالت نے آئندہ سماعت پر حمزہ شہباز کو بھی پیش کرنے کی ہدایت کر دی۔

 

رمضان شوگر ملز اور آشیانہ اقبال ہاوسنگ کیس میں نامزد ملزم اپوزیشن لیڈر شہباز شریف احتساب عدالت میں پیش ہوئے۔ جج جواد الحسن نے کیس کی سماعت کی۔ عدالت نے استفسار کیا۔ حمزہ شہباز کہاں ہیں؟ آج ان کی حاضری ہونی تھی۔ نیب کے وکیل نے جواب دیا کہ حمزہ شہباز نیب کی حراست میں ہیں۔ دونوں کیسز میں ان کی گرفتاری ڈال کر ریمانڈ لیا تھا۔ شہباز شریف نے عدالت سے کچھ کہنے کی اجازت چاہی۔ بولے میرا علاج لندن میں ہو رہا تھا، اس لیے بیرون ملک میں رہا، عوام کے کروڑوں روپے مختلف پروجیکٹس میں بچائے، عوام کا پیسہ نہیں کھایا، ایمانداری سے دن رات کام کیا، قوم کی خدمت کی، مجھ پر جھوٹے کیسز بنائے گئے۔

 

آشیانہ کیس بھی جھوٹ پر مبنی ہے۔ قوم کی خدمت کا صلہ بےبنیاد مقدمات کی صورت میں ملا۔ نیب قوم اور عدالت کا وقت ضائع کر رہا ہے۔ عدالت نے ریمارکس دیئے کہ میاں صاحب! عدالت کو کسی کی پرواہ نہیں۔۔ فیصلہ میرٹ پر کریں گے۔ کمرہ عدالت میں شہباز شریف نے فواد حسن فواد سے بھی ملاقات کی۔۔ کہا انشااللہ آپ سے ملنے آؤں گا۔ حاضری کے بعد عدالت نے شہبازشریف کو جانے کی اجازت دے دی۔۔ جس کے بعد وہ کمرہ عدالت سے چلے گئے۔ کیس کی سماعت 26 جون تک ملتوی کر دی گئی۔ عدالت نے آئندہ سماعت پر حمزہ شہباز کو بھی پیش کرنے کی ہدایت کر دی۔

عطاء سبحانی  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں