خواجہ برادران کی گرفتاری کیخلاف درخواست پر مزید سماعت 19مارچ تک ملتوی

لاہور(پبلک نیوز) لاہور ہائیکورٹ میں خواجہ برادران کی گرفتاری کے خلاف درخواست پر سماعت، ملزم کو گرفتاری کی وجوہات بتائے بغیر گرفتار کرنا بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہے وکیل سعد رفیق نے عدالت سے استدعا کی۔

 

لاہور ہائیکورٹ میں خواجہ برادران کی گرفتاری کے خلاف دائر درخواست پر جسٹس شاہد کریم نے سماعت کی۔ اے کے ڈوگر وکیل کی جانب سے دائر درخواست میں وفاقی حکومت اور نیب کو فریق بنایا گیا ہے۔ وکیل خواجہ سعد رفیق نے درخواست میں عدالت سے استدعا کی کہ ملزم کو گرفتاری کی وجوہات بتائے بغیر گرفتار کرنا بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔

 

آرٹیکل 10 کے تحت کسی بھی ملزم کو دوران تفتیش گرفتار نہیں کیا جا سکتا۔ نیب آرڈیننس کی سیکشن 24 اے اور 24 ڈی آئین سے متصادم ہیں۔ خواجہ سعدریق کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ نیب آرڈیننس کی سیکشن 24 اے اور 24 ڈی کو کالعدم قرار دے کرتمام گرفتار ملزمان کو رہا کرنے کا حکم دیا جائے۔ عدالت نے کیس کی مزید سماعت 19 مارچ تک ملتوی کر دی۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں