الیکشن کمیشن میں مریم نواز کے پارٹی عہدے کے خلاف درخواست پر سماعت

لاہور(پبلک نیوز) مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کو الیکشن کمیشن کا نوٹس، تحریک انصاف کو اعتراض ہے کہ مریم نواز کی سزا معطل ہوئی ہے بری نہیں ہوئیں۔ پارٹی کی نائب صدارت نہیں سنبھال سکتیں۔

 

الیکشن کمیشن میں مریم نواز کی پارٹی نائب صدر کے عہدے کے خلاف دائرخواست پر چیف الیکشن کمشنر سردار محمد رضا کی سربراہی میں تین رکنی کمیشن نے سماعت کی۔ تحریک انصاف کے وکیل حسن مان نے کہا کہ مریم نواز کا تین مئی دو ہزار انیس کو بطور نائب صدر کے عہدے پر تقرر کیا گیا، جس پر چیف الیکشن کمشنر نے پارٹی انتخابات سے متعلق استفسار کیا تو تحریک انصاف کے وکیل نے بتایا کہ انٹرا پارٹی انتخابات نہیں کرائے گئے۔ تحریک انصاف کے وکیل نے کمیشن کو مریم نواز کی سزا اور ہائی کورٹ سے سزا معطلی کا بتایا۔

 

وکیل کا مؤقف تھا کہ سپریم کورٹ کا فیصلہ ہے، سزایافتہ شخص پبلک آفس نہیں رکھ سکتا، مریم نواز نائب صدر کا عہدہ رکھنے کی اہل نہیں ہیں، الیکشن کمیشن نے مریم نواز اور مسلم لیگ ن کو نوٹس جاری کر دیا۔ الیکشن کمیشن کے باہر مریم نواز کیخلاف درخواست گزار پارلیمانی سیکریٹری بیرسٹر ملیکہ بخاری نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پہلے دن سے مؤقف ہے کہ مریم نواز کا عہدہ رکھنا جمہوری نظام کی نفی ہے۔ الیکشن کمیشن میں مریم نواز کے خلاف تحریک انصاف کی درخواست پر مزید سماعت سترہ جون کو ہو گی۔

عطاء سبحانی  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں