قومی کھیل کا مستقبل تاریک، کامیاب کرانیوالے دعویدار ایک ایک کر کے مستفی

لاہور (کرار ہمایوں) ہاکی ورلڈ کپ میں قومی ٹیم کی بدترین شکست، ہاکی کے سرخیل پاکستان کا درخشاں ماضی واپس لوٹانے میں ناکام، خفت مٹانے کے لیے توقیر ڈار، حسن سردار کے بعد ریحان بٹ اور دانش کلیم نے بھی استعفیٰ دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق ورلڈ کپ میں قومی ہاکی ٹیم کی بدترین پرفارمنس نے کئی سوالات کو جنم دے دیا۔ ہاکی فیڈریشن سے کوچز اور ٹیم منیجمنٹ کے استعفے آ گئے۔ اسسٹنٹ کوچ ریحان بٹ اور دانش کلیم نے بھی استعفیٰ دے دیا۔

نیشنل ہاکی سٹیڈیم میں دانش کلیم نے مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ کھلاڑیوں میں صرف تجربہ تھا پھرتی نہیں۔ ریحان بٹ نے کہا کہ پاکستان کے لیے ہر وقت دستیاب رہوں گا ،، ٹاسک صرف ورلڈ کپ کا لیا تھا۔

دوسری جانب ہیڈ کوچ توقیر ڈار کے بعد اولمپئن قمر ابراہیم اور سمیر حسین کو کو کوچنگ کی ذمہ داریاں دینے کا امکان بڑھ گیا۔

یاد رہے کہ قومی ہاکی ٹیم کی اگلی اسائنمنٹ پرو ہاکی لیگ ہے جس کے ٹریننگ کیمپ کا آغاز یکم جنوری سے ہو گا۔

احمد علی کیف  5 ماه پہلے

متعلقہ خبریں