کھیل کو سیاست زدہ کرنے پر آئی سی سی دھونی کے خلاف ایکشن میں آگیا

نئی دہلی(پبلک نیوز) آئی سی سی نے دھونی کے گلوز پر بھارتی فوج کا نشان ہٹانے کی ہدایت کر دی۔ دھونی نے ورلڈکپ میں جنوبی افریقا کے خلاف میچ میں دستانے پہنے جس پر بھارتی فوج کا نشان موجود تھا۔

 

کھیل کو سیاست زدہ کرنے پر انٹرنیشنل کرکٹ کونسل بھارتی وکٹ کیپر مہندر سنگھ دھونی کے خلاف ایکشن میں آ گیا۔ آئی سی سی نے بھارتی وکٹ کیپر دھونی کے خلاف ایکشن لیتے ہوئے دھونی کے دستانوں سے بھارتی فوج کا لوگو ہٹانے کی ہدایت کردی۔ آئی سی سی کے جی ایم اسٹریٹجک کمیونیکیشن کلیئر فرلانگ کا کہنا ہے کہ بھارتی کرکٹ بورڈ سے کہہ دیا ہے کہ فوجی لوگو ہٹایا جائے۔

 

دھونی نے ورلڈکپ میں جنوبی افریقا کے خلاف میچ میں یہ دستانے پہنے تھے جس پر بھارتی فوج کا نشان موجود تھا۔ کرکٹ ایکسپرٹس نے دوران کھیل میچ ریفری اور فیلڈ ایمپائر کی جانب سے آئی سی سی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کو نظر انداز کرنے کو سوالیہ نشان قرار دیا ہے۔2011ء میں مہندر سنگھ دھونی کو پیراشوٹ رجمنٹ میں لیفٹیننٹ کرنل کا اعزازی عہدہ دیا گیا تھا۔ انہوں نے پیرا بریگیڈ کے تحت تربیت بھی حاصل کر رکھی ہے۔

 

اس سے قبل 8 مارچ 2019 کو بھی بھارتی ٹیم نے رانچی میں آسٹریلیا کے خلاف میچ میں فوجی ٹوپیاں پہن کر میچ کھیلا تھا لیکن اس میچ میں اسے منہ کی کھانی پڑی تھی۔ وفاقی وزراء نے بھارتی ٹیم کی اس حرکت کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے جینٹلمین گیم کو سیاست کی نذر کرنے کی سازش قرار دیتے ہوئے بھارتی ٹیم کے خلاف ایکشن لینے کا مطالبہ کیا تھا۔ اس وقت انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کا کہنا تھا کہ آسٹریلیا کے خلاف تیسرے ایک روزہ میچ میں بھارتی ٹیم کے کھلاڑیوں نے آئی سی سی کی اجازت سے فوجی ٹوپیاں پہنی تھیں۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں