نوازشریف کی سزا معطلی اور ضمانت کی درخواستیں اپیل کیساتھ سنی جائیں گی

اسلام آباد (پبلک نیوز) نوازشریف کی سزا معطلی اور ضمانت کی درخواست مرکزی اپیل کے ساتھ سنی جائے گی۔ اسلام آباد ہائیکورٹ نے نوازشریف کی رٹ پٹیشن سے متعلق فیصلہ سنا دیا۔ نوازشریف نے پھر اسلام آباد ہائیکورٹ کا دروازہ کھٹکھٹا دیا۔ مرکزی اپیل جلد سماعت کے لیے مقرر کرنے کی درخواست دائر کر دی۔

 

نوازشریف کی سزا معطلی اور ضمانت کی درخواست مرکزی اپیل کے ساتھ سنی جائے گی۔ اسلام آباد ہائیکورٹ نے نوازشریف کی رٹ پٹیشن سے متعلق فیصلہ سنا دیا۔ نوازشریف نے پھر اسلام آباد ہائیکورٹ کا دروازہ کھٹکھٹا دیا۔ مرکزی اپیل جلد سماعت کے لیے مقرر کرنے کی درخواست دائر کر دی۔

 

نواز شریف کی رٹ پٹیشن پر ہائیکورٹ نے مختصر حکم سنا دیا۔ مختصر حکم نامے پر چیف جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس عامر فاروق کے دستخط موجود ہیں۔ حکم نامے پر خواجہ حارث کی حاضری لگا دی گئی ہے۔ نواز شریف کی جانب سے دائر کی گئی درخواست میں کہا گیا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ کا ڈویژنل بنچ مرکزی اپیل کی سماعت مقرر ہونے تک کیس نہ سننے کا حکم دے چکا ہے۔ نواز شریف کی درخواست ضمانت عدالت پہلے ہی دائر کی جاچکی ہے۔

 

نواز شریف نے اسلام آباد ہائیکورٹ سے پھر رجوع کرتے ہوئے مرکزی اپیل جلد سماعت کے لیے مقرر کرنے کی استدعا کردی نواز شریف نے اپنے وکیل خواجہ حارث کے ذریعے درخواست دائر کی گئی۔

حارث افضل  4 ماه پہلے

متعلقہ خبریں