پی ٹی آئی امیدوار اکرام اللہ گنڈا پور خود کش حملہ میں شہید

ڈی آئی خان (پبلک نیوز) انتخابات کے انعقاد میں صرف دو دن باقی، دہشتگردوں نے سیاسی شخصیات کو نشانے پر رکھ لیا،انتخابی مہم کے دوران خودکش حملہ کے نتیجہ میں تحریک انصاف کے امیدوار اکرام اللہ گنڈا پور شہید ہو گئے۔

الیکشن کا کاونٹ ڈوان شروع ہوتے ہی دہشتگردوں نے آسان ہدف سیاسی رہنماوں کو نشانہ بنانا شروع کردیا۔ ڈی ائی خان کے علاقے تحصیل کولاچی میں تحریک انصاف کے امیدوار اکرام اللہ گنڈا پور کی گاڑی کے قریب خود کش حملے کے نتیجہ میں متعدد افراد زخمی ہو گئے اوراکرام اللہ رخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے شہید ہو گئے۔

واقعہ کے بعد امدادی ٹیموں نے زخمیوں کو قریبی ہسپتال منتقل کیا۔ دھماکہ میں پی ٹی ائی امیدوار سمیت سابق صوبائی وزیر اکرام اللہ گنڈا پور بھی زخمی ہوئے تھے مگر رخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے شہید ہو گئے۔ سکیورٹی فورسز نے جائے وقوعہ کو گھیرے میں لیکر شواہد اکھٹے کرنا شروع کر دیے ہیں۔

دوسری جانب سابق وزیراعلیٰ کے پی کے اکرم خان درانی کی گاڑی کو بنوں کے علاقے میں نشانہ بنایا گیا ہے۔ حملہ میں اکرام خان بال بال بچ گئے۔ پی ٹی ائی امیدوار اپنی انتخابی مہم میں مصروف تھے کہ اسی دوران حملہ آور نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔

سابق وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا اکرم خان درانی کے قافلے کو ایک بار پھر دہشتگردوں کی جانب سے نشانہ بنایا گیا ہے۔ سابق وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا اکرم خان درانی کے قافلے کو بنوں کے قریبی علاقے میں اس وقت نشانہ بنایا گیا جب وہ انتخابی مہم کیلئے جا رہے تھے۔

 

دہشتگردوں کی جانب سے ان کے قافلے پر فائرنگ کی گئی تاہم خوش قسمتی سے وہ اس حملے میں محفوظ رہے۔ اکرم خان درانی بنوں کے قومی اسمبلی کے حلقہ سے پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کے خلاف انتخاب میں حصہ لے رہے ہیں۔

 

عطاء سبحانی  1 سال پہلے

متعلقہ خبریں