بیل آوٹ پیکج کیلئے آئی ایم ایف کی جانب سے مزید شرائط سامنے آگئیں

اسلام آباد(پبلک نیوز) آئی ایم ایف نے بیل آئوٹ پیکیج کے شرائط مزید کڑی کر دیں۔ بجٹ خسارہ کم کرنے کیلئے حکومتی اقدامات کو ناکافی قرار دے کر مزید اقدامات کی تجویز دے دی۔

 

آئی ایم ایف کی جانب سے بجٹ خسارہ کم کرنے کیلئے حکومتی اقدامات کو ناکافی قرار دے دیا گیا۔ ریونیو شارٹ فال پورا کرنے کیلئے سخت اقدامات اٹھائے جائیں۔ ریونیو میں اضافے کیلئے ایک سو پچاس ارب روپے کے مزید نئے ٹیکس، سیلز ٹیکس کی شرح میں بھی مزید ایک فیصد اضافے کی تجویز اور سیلز ٹیکس 17 سے بڑھا کر 18 فیصد کرنے کی تجویز بھی دی گئی ہے۔

 

جی ایس ٹی میں اضافے سے 70 ارب کا اضافی ریونیو حاصل ہو گا۔ لگژری آئٹمز پر ریگولیٹری ڈیوٹی میں بھی مزید اضافے کی تجویز۔ بجلی گیس پر سبسڈی میں مزید کمی کا مطالبہ۔ بجلی کی قیمتوں میں یکساں ٹیرف مقرر کرنے بھی تجویز۔ ذرائع وزارت خزانہ کے مطابق آئی ایم ایف کی تجاویز سخت ہیں سب پر عمل درآمد ممکن نہیں۔ عالمی مالیاتی ادارے سے شرائط میں نرمی پر بات چیت ہو رہی ہے۔

عطاء سبحانی  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں