جعلی فون کالز سے لاکھوں روپے ہتھیانے کے کیس میں اہم پیش رفت

کراچی (پبلک نیوز) بینکنگ کورٹ میں جعلی فون کالز کیس میں اہم پیش رفت، ملزمان محمد یونس، محمد اسلم، محمد ندیم اور بشری ظہور کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کردئیے گئے۔

 

بینکنگ کورٹ میں جعلی فون کال پر بینک اکاوئنٹ کی معلومات لے کر شہری کے 20 لاکھ روپے ہتھیانے کا معاملہ۔ ایف آئی اے نے مقدمہ کا ضمنی چالان عدالت میں پیش کر دیا۔ چالان میں موقف پیش کیا کہ نجی بینک کے ذریعے تمام موبائل بینک اکاؤئنٹس کا پتہ لگا لیا گیا۔ پچیس موبائل اکاؤئنٹس سے 30 سے 49 ہزار 900 روپے تک نکالے گئے۔ مذکورہ تمام موبائل بینک اکاوئنٹس کو منجمند کر دیا گیا ہے۔

 

 ملزم محمد یونس نے 10 لاکھ جبکہ ملزم محمد اقبال نے 5 لاکھ روپے نکالے۔ ملزم محمد عمران جیل میں جبکہ محمد اقبال نے ضمانت حاصل کر رکھی ہے۔ مفرور ملزمان کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارے جا رہے ہیں۔ ایف آئی اے کی ابتدائی تحقیقات کے مطابق بینک فراڈ کراچی سے پنجاب کے شہروں تک پھیلا ہوا ہے۔ فراڈ کی رقم بہاؤل نگر میں اومنی موبائل ویلٹ اکاوئنٹس کے ذریعے نکالی گئی۔ فراڈ کی تحقیقات اور ملزمان کی گرفتاری کی کوششیں جاری ہیں۔

عطاء سبحانی  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں