وفاق ہر 10 روپے سے 6 روپے صوبوں کو دے دیتا ہے: وزیراطلاعات

اسلام آباد (پبلک نیوز) وفاقی وزیراطلاعات فواد چودھری نے کہا ہے کہ صحافی دادرسی کے لیے کسی کے پاس نہیں جاسکتے۔ ہر سال 5 ہزار 571 ارب روپیہ ٹیکس سے اکٹھا ہوتا ہے۔ 18ویں ترمیم سے پہلے وفاق کے پاس بہت پیسا تھا۔

 

ہر سال 5 ہزار 571 ارب روپیہ ٹیکس سے اکٹھا ہوتا ہے۔ صحافی دادرسی کے لیے کسی کے پاس نہیں جاسکتے۔ پاکستان کو ادائیگیوں کے بحران سے نکالا۔ پچھلے 10 سالوں میں قرضوں میں اضافہ ہوا۔ 18ویں ترمیم سے پہلے وفاق کے پاس بہت پیسا تھا۔ 18ویں ترمیم سے صوبوں کو زیادہ مالیاتی اختیارات ملے۔

 

 

عمران خان کا وژن ہے کہ افغانستان میں امن ہو۔ افغانستان میں امن ہوگا تو پاکستان کی معیشت مزید بہتر ہوگی۔ امریکا پہلے سے زیادہ اب پاکستان کا مؤقف سمجھتا ہے۔ معیشت کے حالات اب پہلے سے بہتر ہیں۔ قرضوں پر سود کے لیے بھی 2 ہزار ارب درکار ہیں۔

 

وفاق ہر 10 روپے سے 6 روپے صوبوں کو دے دیتا ہے۔ رولز آف بزنس میں ترمیم کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ معیشت کی بدحال صورتحال ہمیں وراثت میں ملی۔ 43 آرگنائزیشن مرحلہ وار ختم کر دی جائیں گی۔ وزیراعظم نے حاجیوں کو بہترین سہولیات فراہم کرنے کی ہدایت کی ہے۔ 1 لاکھ 84 ہزار حاجیوں کا کوٹہ ملا ہے۔ سعودی ولی عہد بہت جلد پاکستان آرہے ہیں۔

 

ای سی ایل میں شامل 32 لوگوں کا نام نظرثانی کمیٹی کو بھیجا ہے۔ پاکستان میں سیاحت کو فروغ دینا چاہتے ہیں۔ کوئٹہ سے براہ راست حج کے لیے پروازیں چلائی جائیں گی۔ 50 ممالک کو ویزہ آن ارائیول کی سہولت دے دی گئی۔

حارث افضل  6 ماه پہلے

متعلقہ خبریں