رکن اسمبلی کو زیب نہیں دیتا اسلحہ لے کر چیک پوسٹ پر کھڑا ہوجائے:  شوکت یوسفزئی

پشاور (پبلک نیوز) وزیر اطلاعات خیبر پختونخواہ شوکت یوسفزئی نے کہا ہے کہ دنیا میں کہیں نہیں ہوتا چیک پوسٹ پر روکا جائے اور کوئی نہ رکے۔ کچھ لوگ نہیں چاہتے قبائلی علاقوں میں امن ہو۔ فوج جاتی ہے تو ان پر فائرنگ ہوتی ہے، فوج پاکستان کا حصہ ہے۔

 

وزیر اطلاعات خیبر پختونخواہ شوکت یوسفزئی کا پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہنا تھا کہ قبائلی علاقوں میں انفراسٹریکچر کے لیے امن ناگزیر ہے۔ کچھ لوگ نہیں چاہتے قبائلی علاقوں میں امن ہو۔ فوج جاتی ہے تو ان پر فائرنگ ہوتی ہے۔ ان کا مطالبہ تھا علاقے سے فوج چلی جائے۔ فوج پاکستان کا حصہ ہے، دفاع کرنا ان کی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے اعتراف بھی کیا ہے ان کے پاس اسلحہ تھا۔

 

شوکت یوسفزئی کا کہنا تھا کہ ہمارے پاس پارلیمنٹ ہے، وہاں بات ہو سکتی ہے۔ بڑے بڑے لوگ تو ایک طرف ہو جاتے ہیں۔ جس دن مظاہرہ ختم ہونے لگا 2 ارکان اسمبلی نے کہا ہم آ رہے ہیں۔ رکن اسمبلی کو زیب نہیں دیتا اسلحہ لے کر چیک پوسٹ پر کھڑا ہوجائے۔ کچھ لوگوں کی رہائی میں پی ٹی ایم کا کیا کام ہے؟ پاکستان دشمن مذموم مقاصد میں کبھی کامیاب نہیں ہوں گے۔ دنیا میں کہیں نہیں ہوتا چیک پوسٹ پر روکا جائے اور کوئی نہ رکے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ سب ثبوت موجود ہیں پی ٹی ایم کو کیسے اور کہاں سے پیسے ملتے ہیں۔ جو لوگ امن لائے آپ اسی فوج کو للکار رہے ہیں۔ سب چیزیں سمجھ آچکی ہیں۔ یہ لوگ پھر پشتنوں کو استعمال کرنا چاہتے ہیں۔ بلاول بھٹو سندھ پر توجہ دیں پھر باقی باتیں کریں۔ قانون توڑنے والوں سے کوئی رعایت نہیں ہوگی۔

حارث افضل  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں