منی لانڈرنگ کیس: آصف زرداری، فریال تالپور کی ضمانت میں 14 فروری تک توسیع

کراچی(حمزہ گیلانی) بینکنگ کورٹ نے منی لانڈرنگ کیس میں آصف زرداری اور فریال تالپور کی ضمانت میں 14 فروری تک توسیع کر دی گئی، انور مجید اور عبدلاغنی مجید کی درخواست ضمانت پر سماعت 6 فروری تک ملتوی کر دی۔

 

کراچی میں بینکنگ کورٹ میں میگا منی لانڈرنگ کیس کی سماعت ہوئی، جج نے ریمارکیس دیئے کہ سپریم کورٹ نے جب تک کارروائی سے نہیں روکا تھا ہم درخواستوں پر فیصلہ کر رہے تھے،عدالت نے اے جی مجید کو مکمل میڈیکل سہولیات فراہم کرنے کا حکم دے دیا، انور مجید اور اے جی کی ضمانت کی درخواست کی سماعت چھ فروری کو ہو گی، عدالت نے آصف زرداری، فریال تالپور اور دیگر کی عبوری ضمانت میں 14 فروری تک توسیع کر دی۔

 

جیل حکام نے کہا کہ اومنی گروپ کے چیئرمین انور مجید کو پیش نہیں کیا جائے گا، جیل حکام نے ملزم انور مجید کی میڈیکل رپورٹ پہنچا دی، انور مجید این آئی سی وی ڈی میں زیر علاج ہیں، ملزم انور مجید کو پیش نہیں کیا جا سکتا، عبوری ضمانت پر رہا دیگر ملزمان عدالت پہنچ گئے، ذوالقرنین، نمر مجید و دیگر ملزمان عدالت پہنچ گئے۔

 

ایف آئی اے پراسیکیورٹر نے موقف دیا کہ تفتیش چل رہی ہے، معاملہ نیب کو منتقل ہو رہا ہے، حتمی تفتیش تک ضمانتوں پر کارروائی روک دی جائے، ایف آئی اے تفتیشی افسر اسلام آباد میں مصروف ہے۔ سپریم کورٹ کا فیصلہ عدالت کو پڑھ کر سنایا گیا۔ وکیل انور مجید نے کہا کہ انور مجید اور اے جی مجید کو ضمانت دی جائے، سپریم کورٹ کا فیصلہ آچکا ہے۔ حکم امتناعی فعال نہیں، ایف آئی اے سے حتمی چالان طلب کیا جائے، اگر حتمی چالان نہیں آتا تو پھر عبوری کو ہی حتمی چالان تصور کیا جائے۔

 

وکیل انور مجید نے کہا کہ کہاں لکھا ہے کہ حکم امتناعی برقرار رکھا جائے، سپریم کورٹ کی فائینڈنگ میں حکم امتناعی کو برقرار رکھنے کا کہیں ذکر نہیں۔ سپریم کورٹ کا فیصلہ ختم ہو چکا، اب بینکنگ کورٹ فیصلہ کرنے میں آزاد ہے، اب نیب فیصلہ کرے گا کہ ریفرنس دائر ہونا چاہیے یا نہیں۔ ایف آئی اے والوں سے ڈر لگتا ہے انہوں نے بڑے بڑے معتبر لوگوں کو نہیں چھوڑا۔

 

وکیل صفائی نے کہا مجھے ڈر ہے کہیں تحقیقات میں آپ کا نام بھی نہ لکھ دیں، اے جی مجید کو سرجری کی ضرورت ہے مگر ٹریٹمنٹ نہیں دیا جا رہا ہے۔ آصف زرداری روسٹرم پر آگئے۔ عدالت کا آصف زرداری سمیت ملزمان کو پیچھے بیٹھنے کا حکم۔عدالت نے کہا بغیر تفتیش کو دیکھے ضمانت کیسے چلا سکتے ہیں، تفتیشی افسر موجود ہے نہ ایف آئی اے ریکارڈ، کیس کیسے چلائیں، پہلے سپریم کورٹ کے فیصلہ، ریکارڈ اور تفتیشی افسر کو آنے دیں۔

 

جج نے ریمارکیس دئیے کہ سپریم کورٹ نے جب تک کارروائی سے نہیں روکا تھا ہم درخواستوں پر فیصلہ کر رہے تھے۔ عدالت نے اے جی مجید کو مکمل میڈیکل سہولیات فراہم کرنے کا حکم دے دیا، انور مجید اور اے جی کی ضمانت کی درخواست کی سماعت چھہ فروری کو ہوگی، عدالت نے آصف زرداری، فریال تالپور اور دیگر کی عبوری ضمانت میں 14 فروری تک توسیع کر دی۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں