آئینہ ان کو دکھایا تو برا مان گئے

اپنا پھینکا بم ہی بھارتی حکومت کے لیے بن گیا گلے کی ہڈی۔ بھارتی حکومت کے لیے کرتار پور گوردوارہ میں نصب بم درد سر بن گیا ہے۔

کرتار پور کا یہ بم 1971 کی جنگ میں بھارتی حکومت کی جانب سے یہاں گرایا گیا تھا جو گوردوارہ میں واقع کنویں میں گر گیا۔

سکھ عقیدہ کے مطابق بابا گورونانک کی کرامت کے باعث یہ بم پھٹا نہیں اور بعد میں اسے نکال کر نمائش کے لیے رکھ دیا گیا۔ دربار میں کنویں کے پاس شیشے میں محفوظ یہ بم اب بھارتی حکام کی نیندیں حرام کیے ہوئے ہے۔

بھارتی حکام کے مطابق سکھ چاہے جتنا بھی بھارت کے ساتھ لگاﺅ رکھتے ہوں، جب انہیں معلوم ہو گا کہ بھارتی فوج نے جنگ میں گوردوارہ پر بم پھینکا تھا تو ان کی مذہبی وابستگی انہیں بھارتی فوج سے متنفر کر سکتی ہے جس کے منفی اثرات سامنے آسکتے ہیں۔

بھارتی حکومت کی جانب سے اب پاکستانی حکومت سے اس بم کو ہٹانے کا مطالبہ کرنے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ یہ بم کب تک بھارتی حکام کی نیندیں حرام کیے رکھتا ہے۔

احمد علی کیف  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں