کیوی وزیراعظم نے فوجی طرز کے ہتھیار رکھنے پر پابندی کا اعلان کر دیا

کرئسٹ چرچ(پبلک نیوز) نیوزی لینڈ میں مساجد پر ہونے والی دہشتگردی کی کارروائی کے بعد اعلان کیا گیا کہ فوجی طرز کے ہتھیار رکھنے پر پابندی ہو گی۔ اسلحہ واپس نہ کرنیوالوں کو 4 ہزار ڈالر جرمانہ اور 3 سال تک قید کی سزا ہو سکتی ہے۔

 

نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جیسنڈا آرڈن نے خود کار ہتھیاروں پر پابندی کا اعلان کر دیا۔ خود کار ہتھیار بنانے میں مدد کار تمام ہتھیاروں پربھی پابندی ہو گی۔ اسلحہ پر پابندی کے لیے جلد قانون سازی کی جائے گی، آئندہ ہفتے کابینہ اسلحہ کی رجسٹریشن کے قواعد پرغور کرے گی۔ نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جیسنڈا ایرڈن نے کہا کہ گن ریفارمز عوام کے مفاد میں ہے۔ شہری ممنوعہ اسلحہ سے متعلق پولیس سے رابطہ کریں۔

وزیراعظم جیسنڈا آرڈن نے لوگوں کے پاس پہلے سے موجود اسلحہ واپس خریدنے کے لیے بھی اسکیم کا اعلان کر دیا۔ اسلحہ کی واپسی پر10 سے 20کروڑ ڈالر اخراجات آئیں گے۔ ایمنسٹی اسکیم کے دوران اسلحہ واپس نہ کرنیوالوں کو 4 ہزار ڈالر جرمانہ اور 3 سال تک قید کی سزا ہو سکتی ہے۔

عطاء سبحانی  4 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں